کھیل

آسٹریلیا نے ہندوستان کو 287 رنوں کا ہدف دیا

پرتھ، 17:میزبان آسٹریلیا نے پرتھ میں کھیلے جا رہے دوسرے کرکٹ ٹسٹ کے چوتھے دن پیر کے روز فتح کے لیے ہندوستانی کرکٹ ٹیم کو 287 رنوں کا مشکل ہدف دیا۔
ہندوستان نے آسٹریلیا کی دوسری اننگز کو صبح 93.2 اوور میں 243 رن پر سمیٹ دیا۔ پہلی اننگز میں 43 رن سے پچھڑنے والی ہندوستانی ٹیم کے لئے تیز گیند محمد سمیع نے 56 رنوں پر چھ وکٹ لے کر کیریئر کی بہترین گیند بازی کرتے ہوئے مخالف ٹیم کو 300 رنوں سے نیچے روک دیا۔ آسٹریلیا نے پہلی اننگز کی برتری کی بنیاد پر ہندوستان کے سامنے جیت کے لیے 287 رن کا ہدف رکھا۔
پرتھ کی تیز اور اچھال بھری پچ پر آسٹریلیا نے اپنے آخری چھ وکٹ 51 رن کے وقفے پر گنوائے، اگرچہ مشیل اسٹارک اور جوش ہیزل وڈ نے فائنل وکٹ کے لئے 36 رن کی مفید شراکت داری سے ٹیم کو بہتر اسکور دینے میں مدد کی۔ آسٹریلیا کی دوسری اننگز میں عثمان خواجہ 72 رن بنا کر ٹاپ اسکورر رہے۔
آسٹریلیا نے اننگز کا آغاز چار وکٹ پر 132 رن سے آگے بڑھتے ہوئے کیا تھا اور اس کے کل کے ناٹ آؤٹ بلے باز خواجہ اور ٹم پین نے صبح کے سیشن میں ہندوستانی گیند بازوں کو کافی پریشان کیا۔ دونوں بلے بازوں نے چھٹے وکٹ کے لئے 72 رن کی شراکت داری سےاپنی ٹیم کی برتری میں اہم کردار ادا کیا۔


خواجہ نے کل کے اپنے اسکور میں اضافہ کرتے ہوئے نصف سنچری بنائی اور 213 گیندوں میں پانچ چوکے لگا کر 72 رن بنائے جبکہ ان کے شراکت دارپین نے 116 گیندوں میں چار چوکوں کی مدد سے 37 رن کی بہترین اننگز کھیلی۔ اگرچہ پچ پر کافی اچھال اور تیزی ایک بڑی وجہ رہی جس کی وجہ سے آسٹریلیا نے اپنے آخری چھ وکٹ صرف 51 رن کے وقفے پر گنوا دیئے۔
پین کو سمیع نے192 کے اسکور پر وراٹ کوہلی کے هاتھوں کیچ کراکر دن کا پہلا اور آسٹریلیا کا پانچواں وکٹ لیا۔ اس کے بعد آرون فنچ (25) کو سمیع نے وکٹ کیپر رشبھ پنت کے ہاتھوں کیچ کراکر چھٹا وکٹ لیا۔ خواجہ بھی اس کے چھ رن بعد ہی سمیع کا ہی شکار بنے اور پنت نے انہیں کیچ کیا۔ باقی وکٹ بھی مسلسل گرتے رہے۔
آسٹریلیائی ٹیم نے دوسری اننگز میں اپنی 233 رنوں کی برتری میں تھوڑا اضافہ کیا لیکن چوتھے دن ہندوستانی گیند بازوں کے سامنے اس کے بلے بازوں نے 1.93 رن فی اوور کے حساب سے صرف 58 رنوں ہی مزید کا اضافہ کیا۔اس کا اندازہ اسی سے لگایا جا سکتا ہے کہ خواجہ نے اپنی سست اننگز میں وکٹ بچاتے ہوئے رن حاصل کئے اور اپنی 14 ویں نصف سنچری تک پہنچنے کے لئے انہیں 155 گیندوں کی ضرورت پڑی۔ سمیع نے خواجہ کو ساتویں بلے باز کے طور پر آؤٹ کیا۔

پیٹ کمنز صرف ایک رن ہی بنا سکے۔ انہیں جسپريت بمراه نے بولڈ کیا۔ ناتھن لیون نے 14 رن بنائے اور سمیع نے انہیں هنوما وهاري کے ہاتھوں کیچ کراکے اننگز میں اپنا چھٹا وکٹ حاصل کیا جو ان کی ٹیسٹ میچ کی اننگز میں بہترین کارکردگی بھی ہے۔سمیع کی اس سے پہلے کی بہترین کارکردگی، اننگز میں 28 رن پر پانچ وکٹ تھی۔ سمیع اگرچہ پہلی اننگز میں مہنگے ثابت ہوئے تھے اور 80 رن دے کر کوئی وکٹ حاصل نہیں کر سکے تھے۔
دیگر تیز گیند باز بمراه نے مشیل اسٹارک (14) کو بولڈ کرکے آسٹریلیا کی اننگز سمیٹ دی۔ اسٹارک نے ہیزل وڈ (ناٹ آؤٹ 17) کے ساتھ آخری وکٹ کے لئے 36 رنوں کا اضافہ کیا۔ انہوں نے 25 گیندوں کی اننگز میں دو چوکے لگائے۔
بمراه نے کفایتی گیند بازی کرتے ہوئے 25.2 اوور میں 39 رن دے کر آسٹریلیا کے تین وکٹ لئے جبکہ سمیع نے شاندار گیند بازی کرتے ہوئے 24 اوور میں 56 رن پر چھ وکٹ نکالے۔ ایشانت شرما نے 45 رن پر ایک وکٹ لیا۔ امیش یادو کو 61 رن اور هنوما کو 31 رن پر کوئی وکٹ نہیں ملا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close