بہارمتھلانچل

اسفا پل کےاپروچ راستہ کی حالت خستہ

بیگوسرائے: ناؤکوٹھی ، ہزاروں لوگوں کو روزانہ ضلع ہیڈکواٹر تک پہنچنے والی اسفا میں تعمیر شدہ بوڑھی گنڈک ندی پر کروڑوں روپے کی لاگت سے بنے پل اپروچ راستے کے جرجرہونے سے آمدورفت پوری طرح چرمڑاگئی ہے۔ اور اپروچ راستے میں درجنوں گڈے برسات کی معمولی چپیٹ سے پوری طرح ٹوٹنے کا کاگار پر ہے۔ اسفا گاؤں سے پل کو چوڑنے والی اپروچ راستہ بننے کے وقت سے ہی گھٹیاسامان استعمال ہونے کی وجہ سے جرجر بنا ہوا ہے۔ بکھری، الولی، کھگڑیا، ناؤ کوٹھی، ڈنڈاری بلاک کے ہزاروں مسافر بیگوسرائے ضلع ہیڈ کواٹرسمیت کورٹ اور علاج کے کام سے ،تجارت کی غرض سے ہرایک روز لوگ اس راستے سے سفر کرتے ہیں۔ ناؤ کوٹھی بھایا مجھول ہوکر بیگوسرائے جانے میں لگ بھک 45-35 کیلومیٹر کی دوری طے کرنا پڑتاہے جبکہ اسفا پل سے بیگوسرائے کی دوری 17-15 کیلو میٹر ہوتی ہے۔ مسافروں کو سفر طے کرنے میں دوری کے ساتھ ساتھ وقت بھی بچت ہوتا ہے۔ پل سے اسفا گاؤں تک سڑک میں درجنوں چھوٹے بڑے گنڈھے موٹر سائیکل سوار سے لے کر پیدل چلنے والوں تک کے لئے حادثہ کو کھلے عام دعوت دے رہی ہے۔ مقامی لوگوں میں رالوسپا بلاک صدر للن مہتو، آرجے ڈی لیڈر محمد ناظم نے اس سے متعلق بتایا کہ درجنوں بار اعلیٰ افسران کو تحریری شکایت دئے گئے اس کے باوجود بھی اس پر کوئی کارروائی نہیں ہوئی ہے۔ اس لئے لوگوں نے ڈی ایم بیگوسرائے اپروچ راستے تعمیر کی مانگ کی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close