پٹنہ

اسپتال کے باہر آشاکارکنان کا مظاہرہ، کام کا بائیکاٹ

پٹنہ:مختلف مطالبات کے لئے آشا کارکنان نے سنیچر کو پرائمری صحت مرکز پالی گنج میں تالابندی کر کے جم کر ہنگامہ کیا۔ساتھ ہی انہوں نے غیر معینہ مدت کےلئے کام کے بائیکاٹ کا بھی اعلان کر دیا۔ اس دوران او پی ڈی خدمات بھی بند ہوگئی۔آشا کارکنان اسپتال کے مین گیٹ کے آگے بیٹھ کر وزیر اعلیٰ نتیش کمار کے خلاف نعرے بازی کرنے لگیں۔ ہنگامے کے سبب او پی ڈیئ کا کام بھی متاثر ہوگیا۔ حالانکہ آشا کارکنان کے ہنگامے کی خبر ملتے ہی اسپتال کے ڈاکٹر باہر نکل گئے ۔
قابل ذکرہے کہ آشا کارکنان کا مطالبہ ہے کہ بہار حکومت انہیں سرکاری ملازم قرار دے اور ان کی تنخواہ 18ہزار روپے کی جائے۔اس کے ساتھ ہی کارکنان کے دیگر کئی مطالبات بھی ہیں۔ اپنے کئی مطالبات کو لے کر آشاکارکنان کی ایک ٹیم نے پرائمری صحت مرکز کے میڈیکل افسر کو عرضداشت سونپی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close