بہارمتھلانچل

آنگن باڑی میں تعلیم اور تغذیہ پروگرام کو معیارکے مطابق کریں نافذ

آئی سی ڈی ایس کی نشست میں ضلع مجسٹریٹ نے دیا حکم

دربھنگہ :تمام آنگن باڑی سینٹرو ں میں اسکول سے پہلے کی تعلیم اور تغذیہ پروگرام کو معیارکے مطابق نافذ کریں ۔ اس کیلئے ریگولر معائنہ اور نگرانی کی جائے ۔ اور سینٹروں میں پائی جانے والی کمیوں کو طے وقت کے اندر دور کیاجائے ۔ ضلع مجسٹریٹ ڈاکٹر چندر شیکھر سنگھ نے سمیکت بال وکاس پریوجناسے متعلق ماہانہ جائزہ نشست میں مذکورہ ہدایات دئیے ۔ ضلع مجسٹریٹ نے کہا کہ متعلقہ افسرہفتہ میں تین دن حلقہ میں رہ کر معائنہ ضرور کریں ۔آنگن باڑی سیویکا سہایکا کی بحالی کے جائزہ کے دوران پایا گیا کہ 1029سیویکا اور 954سہایکا کی بحالی کیلئے اشتہار نکالا گیا تھا ۔اس میں سے اب تک 476سیویکا اور 312سہایکا کی بحالی ہوئی ہے ۔ جن آنگن باڑی سینٹروں کیلئے اب تک بحالی کاکام پورا نہیں ہوا ہے وہاں مجسٹریٹ مامور کرکے سیویکا اور سہایکا کی بحالی مکمل کرلینے کو کہا گیا ۔ جن سات بلاکوں میں خالی سیٹ سے متعلق اشتہار نہیں نکالا گیا ہے وہاں ایک ہفتہ کے اندر اشتہار نکال کر بحالی کا عمل شروع کرنے کا حکم دیا گیا ۔نو تقرر سیویکا اور سہایکا کو معقول ٹریننگ دینے کیلئے بھی روسٹر بنانے کا حکم ضلع پروگرام افسرکو دیا گیا ۔پوشاہار تقسیم جائزہ کے دوران ڈی ایم نے کہا کہ بچو ںکو ملنے والی غذا ہر حالت میں معیار کے مطابق ہونی چائیے ۔ جیسے ہی محکمہ سے پوشاہار کیلئے الاٹمنٹ ملے اسے فورا متعلقہ سینٹروں کو بھیجاجانا یقینی بنایا جائے ۔ وزیر اعلی کنیا اتھان منصوبہ سے زیادہ سے زیادہ لڑکیوں کو فائدہ پہنچانے کی ہدایت سی ڈی پی او کو دیا ۔ جائزہ کے دوران یہ پایاگیا کہ ابھی تک 4069کنیااتھان سے متعلق فارم آن لائن بھرے گئے ہیں ۔ ضلع مجسٹریٹ نے کہا کہ آنگن باڑی سیویکا سہایکا اورسوپر وائزر کو یہ ہدف دیا جائے کہ ان کے حلقہ میں کوئی بھی مستحق لڑکی اس منصوبہ سے محروم نہ رہے ۔ اس منصوبہ کا فائدہ اٹھانے کیلئے برتھ سرٹیفکیٹ اور ادھار اورفوٹو کی ضرورت ہوتی ہے ۔ تمام بچوں کا سہولیت سے ادھار کارڈ بنے اس لئے تمام آنگن باڑی سوپر وائزر کو آدھار بنانے کی مشین دی گئی ہے ۔ انہیں ہدایت دی جاتی ہے کہ وہ تمام آنگن باڑی سینٹر پر مفت آدھار بنائیں اور اہل لڑکیوں کا فارم بھروائیں ۔ حاملہ اور دودھ پلانے والی خواتین کی مدد کیلئے شروع وزیر اعظم ماتریتوبندنا یوجناکا ضلع کاہدف ساڑھے چھ ہزارہے ۔ لیکن اب تک صرف چار ہزار درخواست آئے ہیں ۔ فی آنگن باڑی سینٹر پانچ مستحق جٹا اس منصوبہ کاہدف پوراکرنے کا حکم دیا گیا ۔ اس منصوبہ کے تحت خاتون کو حاملہ کے طور پر رجسٹریشن کروانے کے وقت پہلی قسط کے طور پر ایک ہزار روپئے ، زچگی سے قبل جانچ سے پہلے دوسری قسط میں دو ہزار اور بچہ کی پیدائش اور ٹیکہ کاری کے بعد تیسری قسط کے طور پر تین ہزار روپئے دئیے جاتے ہیں ۔آنگن باڑی سینٹر میں پڑھنے والے بچو ںکو تفریح کے ساتھ پڑھائی کروانے کیلئے آنگن باڑی سینٹر کی دیواروں کو گرین پینٹ کیا جائے گا جس پربچے لکھ بھی سکیں گے ۔ یہ کام بھی جلد پورا کرلینے کا حکم دیا گیا ۔ بیٹھک میں عمارت سے محروم آنگن باڑی سینٹرکیلئے عمارت بنانے کا کام مکمل کرلینے کا حکم دیا گیا ۔ جائزہ میں پایا گیاکہ رواں مالی سال میں آنگن باڑی سینٹر پر پوشاہار کیلئے محکمہ سے 13کڑور 20لاکھ الاٹمنٹ ملے تھے جس میں سے 8کڑور 72لاکھ روپئے آنگن باڑی سینٹروں کے بیچ تقسیم کردئیے گئے ہیں ۔ اس موقع پر سماجی تحفظ سیل کے ذریعہ جاری پرورش و دوسرے منصوبوںکا بھی جائزہ لیا گیا ۔ بیٹھک میں متعلقہ افسران اور ملازمین موجود تھے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close