بہارسیمانچل

آیورویدک اسپتال محکمہ جاتی غفلت کا شکار

کٹیہار:اعظم نگر بلاک علاقے کے تحت شيتل پور پنچایت کے شيتل پور گاؤں میں انوسوچیت ذاتی اور انوسچیت جن ذاتی بہبود محکمہ کے ذریعہ چل رہے آیرویدک اسپتال محکمہ جاتی غفلت کا شکار رکھ رکھاؤمتاثر سے عمارت خستہ ہو چکا ہے اور اسپتال میں ڈاکٹر مہینے میں 15 دن حاضر رہتا ہے باقی 15 دن ضلع ہیڈکوارٹر میں عیش آرام کی زندگی گزارتا ہے۔ گاؤں والوں کے مطابق اسپتال کے محکمہ نظرانداز کرنے کی وجہ سے اسپتال کا یہ حال ہوا ہے۔بروقت رکھ رکھاؤ نہیں ہونے اور ملازمین کی حاضری نہیں رہنے کی وجہ سے آیرورویدک اسپتال غفلت کا شکار ہو چکا ہے۔ عمارت بالکل خستہ ہوچکے ہیں کھڑکی اور کیواڑ ٹوٹ چکے ہیں اوراسپتال بھوت بنگلہ بن چکا ہے۔ وہیں مہینہ کا 15 ڈاکٹر حاضر رہتے ہیں دوا نہیں رہنے کی وجہ سے مریضوں کا صحیح علاج نہیں ہوپاتا ہے۔ دوا بھی نہیں مل پاتی ہے۔بہبود محکمہ کی رقم کا یہاں غلط استعمال ہورہاہے۔ اسے دیکھنے سننے والا کوئی بھی نہیں ہے جبکہ گاؤں والوں میں رمن سنگھ، مکل بھگت، بمبم منڈل وغیرہ لوگوں نے بتایا کی مہینے میں 15 دن ڈاکٹرحاضر رہتا ہے لیکن ادویات دستیاب نہیں رہنے کی وجہ مریضوں کامناسب طریقے سے علاج نہیں کیا جاتا ہے اور دوائی نہیں ملتی ہے۔ گاؤں والوں نے مطالبہ کیا ہے کہ ڈاکٹر ہمیشہ حاضر رہیں اور خستہ حال عمارت کی تعمیر جلد کرائی جائے ۔ یہ مطالبہ ضلع مجسٹریٹ پونم کماری سے کی ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close