بین الاقوامی

ایران پرسے ہٹائی گئیں پابندیاں امریکہ نےدوبارہ بحال کر دیں

واشنگٹن: امریکہ نے ایران پر ان پابندیوں کو دوبارہ لاگو کرنے کا اعلان کیا ہے، جنہیں سابق صدر براک اوباما نے سال 2015 کے جوہری معاہدے کے تحت ہٹا لیا تھا۔ بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق امریکہ کی طرف سے ایران کی جہاز رانی، مالیاتی اور توانائی شعبوں میں دوبارہ لگائی گئی پابندیاں پیر سے مؤثر ہوں گی۔
امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی طرف سے گذشتہ مئی مہینے میں ایران کے ساتھ بین الاقوامی جوہری معاہدہ سے الگ ہونے کے اعلان کے بعد امریکہ نے دوسری بار ایران پر پابندی عائد کی ہے۔ امریکہ کے وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے جمعہ کو کہا’’پابندیوں کا مقصد بنیادی طور پر ایران کے رویے کو تبدیل کرنا ہے‘‘۔ انہوں نے 12 مطالبات کی ایک فہرست جاری کی اور کہا کہ اگر ایران خود پر عائد پابندیوں کو ہٹانا چاہتا ہے،تو اسے ان مطالبات کو پورا کرنا چاہئے۔
پومپيو نے جو فہرست جاری کی ان میں دہشت گردی کی حمایت بند کرنا، شام سے فوجیوں کو ہٹانا اور جوہری اور بیلسٹک میزائل کے فروغ دینے کے پروگرام وغیرہ پر مکمل طور پر روک لگانا شامل ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close