بہارمتھلانچل

ایم ایم ٹی ایم کالج میں آئیسا او ر اپوا کے اشتراک سے کنونشن کااہتمام

دربھنگہ: مقامی ایم ایم ٹی ایم کالج میں طلبائتنظیم آئیسا او ر خاتون سیل اپوا کے اشتراک سے کنونشن کااہتمام کیا گیا ۔ کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے مہمان خصوصی اپوا ریاستی سکریٹری ششی یادو نے کہا کہ سرکار کی نگرانی میں خاتون اور بیٹیوں کے ساتھ جاری تشدد کبھی برداشت نہیں کیا جائے گا۔ بہار کی خاتون تنظیموں کی لمبی تحریک کے بعد مظفر پور سمیت دوسرے شیلٹر ہوم کے معاملے میں کچھ کاروائی ہوئی ہے، لیکن یہ اب بھی ناکافی ہے ، اس سے نہ تو اصل ملزمین پر شکنجہ ڈالا جاسکتا ہے اور نہ ہی خاتون حفاظت کی گارنٹی ہوسکتی ہے ۔ تحریک کے دباؤ میں ٹی آئی ایس ایس کی رپورٹ سرکار کو عام کرنی پڑی ہے ۔ اس رپورٹ میں 17؍شیلٹر ہوم کی حالت بے حد خراب بتائی گئی ہے ۔ ا سلئے ہمارا مطالبہ ہے کہ مظفر پور سمیت تمام حساس 110شیلٹر کی جانچ ہائی کورٹ کی نگرانی میں سی بی آئی سے کرائی جائے ۔وزیر منجو ورما نے استعفیٰ دے دیا ہے لیکن وہ لگاتار بی جے پی کے وزیر سریش شرما کا نام لے رہی ہے ۔ایسے میں بی جے پی کو بتاناچائیے کہ آخر وہ شریش شرما کا بچاؤ کیوں کررہی ہے ۔ مسٹر یادو نے کہا کہ ادارہ جاتی جنسی استحصال سے اب یہ معاملہ سینٹر لائز قتل تک پہنچ چکا ہے ۔ پٹنہ کے آسرا شیلٹر ہوم میں دو خاتون کی موت نہایت پراسرار ہے کیونکہ وہاں خاتون کو جبرا غلام بناکر رکھا جارہا تھا ۔ اب ایک ایک کرکے سارے پردے اٹھ رہے ہیں ۔ اس کی آنچ وزیر اعلی نتیش کمار اور نائب وزیر اعلی سوشیل کمار مودی تک پہنچ رہی ہے اس لئے ہمارا مطالبہ ہے کہ ان دونوں لیڈران کو بھی اپنے عہدہ سے استعفیٰ دے دینا چائیے کیونکہ ان کے عہدہ پر رہتے ہوئے بھلا غیر جانبدارانہ جانچ کیسے ہوسکتی ہے ۔ اپواضلع سکریٹری سنچری دیوی اور ضلع صدر سادھنا شرما نے کہا کہ نتیش مودی کی حکومت میں خواتین محفوظ نہیں ہیں ۔ انہیں سڑک پر نکلنے میں خوف کاسامنا کرنا پڑتا ہے ۔ بھاکپا مالے ضلع سکریٹری بیدناتھ یادو ، آئیسالیڈر نیشا کماری اور ردھی رانی نے کہا کہ ملک اور ریاست میں بیٹی پڑھاؤ اور بیٹی بچاؤ کا نعرہ فرضی ثابت ہورہا ہے ۔ کنونش کی صدارت اپوا ضلع سکریٹری سنچری دیوی اور نیشا کماری نے کیا ۔ نظامت کے فرائض اپوا ضلع صدر سادھنا شرما نے کیا ۔ کنونشن میں رنگ منچ کے گلوکار ساتھی راجو رنجن نے مظفر پور کانڈ کے خلاف گیت پیش کیا ۔ کنونشن سے خطاب کرنے والوں میں گنجن کماری ، بے بی کماری ، منگلی کماری ، صبا روشنی ، شبانہ خاتون ، جولی سانڈپ ، نیدھی کماری ، انورادھا کماری ، انشو ، رقیہ خاتون ، انوپم کماری وغیرہ کے نام شامل ہیں ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close