پٹنہ

بینکرس کمیٹی کی میٹنگ میں نائب وزیر اعلیٰ نے بینکوںکے کردار پر سوال کھڑے کئے

پٹنہ:راجدھانی میں سنیچر کو 66ویں ریاستی سطح کے بینکرس کمیٹی کی میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے ریاست کے نائب وزیر اعلیٰ سشیل کمار مودی نے بہار میں بینکوں کے کردار پر سوال اٹھائے ہیں۔ سشیل مودی نےکہا کہ مرکزی حکومت کےجن دھن منصوبہ کے تحت جن لوگوں کے بھی اکائونٹ کھلے ہیں، انہیں پانچ ہزار تک اوور ڈرافٹ دیتی تھی جسے مرکزی حکومت نے بڑھا کر دس ہزار کر دیا ہے۔مسٹر مودی نے کہا کہ جب سے منصوبہ شروع ہوا ہے ، بینکوں کی حصہ داری اچھی نہیں ہے ۔ بینکوں سے ہم نے اپیل کی ہے کہ جو بھی 275بلاک خشک سالی زدہ ہیں، ان بلاکوں میں جتنے بھی وزیر اعظم جن دھن یوجنا کے تحت کارڈ ہولڈر ہیں،ا ن لوگوں کو دس ہزار تک کا اوور ڈرافٹ دیا جائے۔
نائب وزیر اعلیٰ نے کہا کہ سال 2018-19میں بہار میں بینکوں کےذریعہ مختلف شعبوںکےلئے 130000کروڑ روپے کا قرض تقسیم کرنے کا نشانہ مقرر کیا گیا ہے۔ مودی نے بتایا کہ پہلے سے چھ مہینوں میں بینکوں نے 48631کروڑ کا قرض تقسیم کیا ہے جو کہ گزشتہ سال کے مقابلے میں دو ہزارکروڑ زیادہ ہے۔ مسٹر مودی نے بتایا کہ بہار میں تین کروڑ ساٹھ لاکھ کھاتے کھلے ہیںجن میںکل زندہ کھاتوں کی تعداد تین کروڑ اکیس لاکھ ہے۔ ان کھاتوںمیں تقریبا 6738کروڑ روپے جمع ہیں۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close