اتر پردیشہندوستان

بے شک سچا امتی وہی ہے جو وقت کی پابندی کے ساتھ نماز پڑھے

درش قرآن کے جلسے سے مولانا مہتاب عالم کا خطاب

کانپو:۔نماز صرف مصیبت و پریشانی میں ہی فرض نہیں ہے بلکہ دن میں پانچ وقت فرض ہے۔ پانچوں وقت کی نماز پڑھنے والا شخص گناہوں سے ایسے پاک و صاف ہو جاتا ہے جس طرح کہ کسی کے دروازے پر تالاب ہو اور وہ اس میں پابچ مرتبہ نہاتا ہو تو اس کے جسم پر میل باقی نہ رہے گا۔ مذکورہ خیالات کا اظہار مدرسہ کنیز فاطمہ امین القرآن کے زیر اہتمام منعقدہ ماہانہ درس قرآن کے جلسے کو خطاب کرتے ہوئے آل انڈیا غریب نواز کونسل کے شہری صدر حضرت مولانا محمد مہتاب عالم قادری مصباحی نے 3 نمبر پلاٹ چمن گنج میںکیا۔
مولانا موصوف نے کہا کہ نماز مومن کی معراج ہے، نماز ہی ایک ایسی عبادت ہے جو کہ پیغمبر اسلام حضرت محمد مصطفے ﷺ کی آنکھوں کی ٹھنڈک ہے۔ وہ مسلمان امتی کیسا جو اپنے پیارے آقا ﷺ کی آنکھوں کی ٹھنڈک پہنچانے والا کما سے دور رہے۔ بیشک سچا امتی وہی ہے جو وقت کی پابندی کے ساتھ نماز پڑھے۔ نماز جہاں اپنے مالک حقیقی سے پہچان و محبت پیدا کرتی ہے۔ وہیں معاشرہ کو سدھار میں مددگار بھی ہے۔ سچا نمازی وہی ہے جو نماز پڑھنے کے ساتھ ساتھ بے حیائی اور بری بات سے دور رہی۔ صرف اتنا ہی نہیں بلکہ اپنے خاندان، پڑوس، قصبہ، شہر اور ملک کے سدھار و امن و شانتی کیلئے صدا کوشش کرتا رہے۔نماز نہ پڑھنے والوں کی خرابی بتاتے ہوئے کہا کہ ایک بار اسلام کے دوسرے خلیفہ حضرت عمر فاروق ؓ کے پاس ایک شخص نے شکایت کی کہ میرا تیل زمین پر گر گیا ہے اور زمین نے اسے نگل لیا ہے۔ آپ زمین کو حکم دیں کہ وہ میرا تیل واپس کر دے۔ حضرت عمر فاروق اعظمؓ نے ایک پرچہ دیا اور کہا کہ زمین پر گاڑ دو، اب اس شخص نے جیسے ہی زمین پر پرچا گاڑا تو زیمین نے تیل اگرلنا شروع کر دیا۔ یہ دیکھ کر وہ شخص حیران ہو گیا اور حضرت عمر فاروقؓ کی بارگاہ میں عرض کیا کہ آپ یہ بتائیں کہ آپنے پرچے پر آخر کیا لکھا تھا؟ جس نے زمین کو تیل اگلنے پر مجبور کر دیا۔ تو آپنے فرمایا کہ کچھ اور نہیں صرف اتنا لکھا تھا کہ اے زمین اپنے سینے سے تیل نکال دے ورنہ تجھ میں ایک بے نمازی کو دفن کر دیا جائے گا۔ اللہ اکبر! اے نماز سے دور رہنے والے مسلمانوں اس واقعہ سے عبرت حاصل کرواور نماز کے پابند ہو جائو ورنہ کہیں ایسا نہ ہو کہ زمین تمہیں قبول نہ کرے۔
اس سے قبل جلسے کا آغاز تلاوت قرآن پاک سے حافظ و قاری محمد عامر نے کی اور بارگاہ رسالت میں جمیل اکمل، حافظ سرفراز، رشید موہانی، مولانا محمد فہیم نوری نے نعت شریف کا نذرانہ پیش کیا۔
جلسے کی صدارت حضرت مولانا غلام نبی حسن مصباحی خطیب و امام مسجد سرائیں والی و نظامت معذور کانپور کی کی۔ اس موقع پر خاص طور سے آل انڈیا غریب نواز کونسل کے قومی ترجمان محمد شاہ اعظم برکاتی، مدرسہ کنیز فاطمہ امین الاقرآن کے پرنسپل حافظ محمد کلیم، عبد الکلام سابق پارشد، محمد واحد برکاتی، محمد خلیل ، انور، حاجی بدر الدین، حاجی رضوان، محمد ہاشم، عبد الرشید، محمد سمیر، دلشاد، محمد فردوس، اکسام احمد، عطاء وارث، محمد ساحل، محمد مدثر، محمد صیف، محمد ریحان، محمد فیضان، محمد شہزاد، صاحب عالم، محمد اعظم، محمد نصیر وغیرہ لوگ موجو درہے ۔
مدرسہ کنیز فاطمہ امین القرآن کے پرنسپل حافظ محمد کلیم نے جلسے میں آئے ہوئے تمامی لوگوں کا شکریہ ادا کیا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close