پٹنہ

ترقی کا فائدہ بھائی چارہ کے ساتھ رہنے میں ملے گا:نتیش کمار

پٹنہ :وزیر اعلیٰ جنا ب نتیش کمار آج سمستی پور ضلع کے بتھان بلاک کے تحت کریہہ ندی کے پھوہیا گھاٹ پر10.54 کروڑ روپے کی لاگت سے 159.24میٹر طویل اعلیٰ سطح کے پل کی تعمیر کا کام شروعات تاسیسی پتھر کی نقاب کشائی کر کے کیا ۔ اس کے علاوہ ’گرامین ٹولہ سمپرک نشچے یوجنا‘اور وزیر اعلیٰ گرام سمپرک منصوبہ کے تحت 13دیگر منصوبوں کا افتتاح ، کام کی شروعات اور سنگ بنیاد وزیر اعلیٰ نے رکھا ۔ پروگرام کے لیے بنائے گئے اسٹیج پر رورل ورک محکمہ کے سیکریٹری ونئے کمارنے گلدستہ پیش کر کے وزیر کا خیر مقدم کیا ۔ مقامی ممبر اسمبلی راجکمار رائے نے شال ، دستار آور مکھانہ کا ہار دیے کر ،جبکہ کارکنان نے پھولوں کا بڑا ہار پہنا کر وزیر اعلیٰ کا استقبال کیا ۔پروگرام کو خطاب کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ آج اس پروگرام میں شامل ہوکر آپ تمام کے اندر جو جوش و جزبہ ہے اسے دیکھ کر ہمیں اطمینان ہو رہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ انصاف کے ساتھ ترقی کے تئیں ہمارا عزم ہے۔ جس کا مطلب ہے ہر طبقہ اور علاقوں کی ترقی کر ناتاکہ حاشیہ پر کھڑے لوگوں کو مین اسٹریم سے جوڑا جائے۔ ہم لوگوں کا نشانہ ، اعزاز اور بنیادی اصول ہے ، ہر علاقہ اور ہر طبقہ کی ترقی کر نا ۔ مقامی ممبر اسمبلی جناب راجکمار رائے کی ستائش کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ اپنے علاقہ کی ترقی کے لیے یہ ہمیشہ سرگرم رہتے ہیں جن کی کو شش سے ہی آج اس علاقہ میں ترقی کے کئی کام ہوئے ہیں ،یا ہو رہے ہیں ۔ پہلے کے مقابلہ میں اب یہاں کے حالات میں کافی بہتری آئی ہے ۔
وزیر اعلیٰ نے کہا کہ پہلے دیہی علاقوں میں سڑکیں کہاں تھیں؟ آنجہانی اٹل بہار واجپئی کی حکومت میں جب ہم ریل ، ایگریکلچر کے ساتھ دیگر محکموں کے وزیر تھے ، اس وقت وزیر اعظم رورل ڈیولپمنٹ منصوبہ شروع کیا گیا تھا، جس کی سب سے زیادہ ضرورت بہار کو تھی ۔ لیکن وزیر اعظم رورل سڑک منصوبہ کے کام کا فریضہ مرکزی ایجنسی کو سوپنے کے سبب کام نہیں ہوا ۔انہوں نے کہا کہ جب ہم نے بہار کی کمان سنبھالی تو وزیر اعظم رورل سڑک منصوبہ کا کام ریاستی حکومت کے توسط سے کرانے کا فیصلہ کیا اور اس کے لیے رورل ورک محکمہ کی شروعات کی ۔ وزیر اعظم دیہی سڑک منصوبہ میں1000سے زیادہ آبادی والے گائوں کی پختہ سڑک ، سے جورا جارہا تھا ، ہم نے وزیر اعلیٰ دیہی سڑک منصوبہ شروع کر کے 500 تک کی آبادی والے گائوں کو پختہ سڑک سے جورنا طے کیا ۔ اس کے بعد مرکزی حکومت نے وزیر اعلیٰ دیہی سڑک منصوبہ کے ذریعہ 500-1000کی آبادی والے گائوں کو پختہ سڑک سے جوڑنا شروع کیا ۔ تب ہم لوگوں نے ’وزیر اعلیٰ گرام سمپرک منصوبہ ‘شروع کیر کے 250تک کی آبادی والے گائوں کو پختہ سڑک سے جوڑنا شروع کیا ۔سات عزائم منصوبہ کے تحت ہو رہے ترقیات کے کام کا ذکر کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ اس منصوبہ میں ٹولوں کو پختہ سڑکوں سے جوڑنے کے لیے ٹولہ سمپرک منصوبہ بھی شروع کیاگیا ۔اس کے لیے ایریل سروے کرنے کے بعد زمین پر جاکر ٹولوں کی تصدیق کی گئی ۔ انہوں نے ک ہا کہ 2020 تک وزیر اعظم دیہی سڑک منصوبہ سے اگر کوئی گائوں چھوٹ گیاتو اسے وزیر اعلیٰ گرام سمپرک منصوبہ سے جوڑا جائے گا ۔ اس کے لیے پیسوں کی کمی نہیں ہو گی۔ رورل ورک محکمہ کو بازار سے ٹولہ رابطہ منصوبہ کے لیے قرض ضرورت کے مطابق لینے کی ہدایت دی گئی ہے ۔ ریاستی حکومت اس کے لیے سوداداکر تی رہے گی ۔
وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وزیر اعظم گرام سڑک منصوبہ ، وزیر اعلیٰ گرام رابطہ منصوبہ یا دیگر کسی بھی منصوبہ کے تحت اب تک جو سڑکیں پورے بہار میں تعمیر کی گئی ہیں یا تعمیر کی جائیں گی اس کے رکھ رکھائو کے لیے نئی پالیسی بنائی گئی ہے۔اس کے لیے کابینہ کی منظور ی بھی دی دی گئی ہے اور اس پر عمل ہو گا ۔انہوں نے کہا کہ گائوں کی حالت کودیکھتے ہوئے اب گائوں کی سڑکوں کو بھی چوڑا اور مضبوط بنا یا جائے گا تاکہ لوگ بلندی سے رہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جو سڑک باقی ہے ان پر آئندہ سال کام شروع ہو گا اور 2020 تک بہار میں سڑکوں کا کام پورا کر نے کے ساتھ ہی خستہ حال سڑکوں کی حالت درست کی جائیگی۔
وزیر اعلیٰ نے کہا کہ 7عزائم منصوبہ کے توسط سے ہر گھر نل کا جل ،ہر گھر پختہ گلی نالی ،ہر گھر اجابت خانہ سمیت دیگر بنیادی سہولت لوگوں تک پہنچائی جارہی ہے اور اب تک ان سات عزائم میں سے دو عزم ریاستی حکومت کی سروس میں خواتین کو 35فیصد ریزرویشن اور ہر گھر بجلی کنکشن کاکام پورا ہو گیا ہے ٰ ہر گھر بجلی پہنچانے کانشانہ 31دسمبر 2018تک متعین کیاگیا تھا ،جسے دو ماہ پہلے ہی پوار کر لیا گیا ۔ انہوں نے کہا کہ جب ہم ممبر پارلیمنٹ اور مرکز میں وزیر تھے تو ہر دن 10سے 18کیلو میٹر تک ہمیں پیدل چلنا پڑتا تھا لیکن اب ہم نے ہر ایک گرام پنچایت میں 4سے 10لوگوں کے بیٹھنے کی صلاحیت والی 5گاڑی خرید نے کی نئی اسکیم تیار کی ہے اس کے لیے ریاستی حکومت ہر گاڑی پر ایک لاکھ روپے کی مدد کریگی ۔ گاڑی خرید نے والوں میں 3دلت طبقہ اور 2انتہائی پسماندہ طبقہ کے لوگ ہوں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم ترقی کا ایک ایک کام نئے نئے منصوبے بنا کر کر تے رہیں گے ۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ سماج سدھار کے لیے ہمارا عزم ہے اور شراب بندی نافذ کر کے ہم نے سماج سدھار کی بنیاد رکھی ہے۔ اس کا سب سے زیادہ فائدہ غریب لوگوں کو ہوا ہے ۔ جو اپنی گاڑھی کمائی کا پیسہ شراب میں گنوادیتے تھے ، شراب پی کر گھر میں جھگڑا کر تے تھے ۔اب ان سب چیزوں پرروک لگ گئی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ گڑ بڑ کرے میں لگے ہیں یہ فطری ہے کہ لاکھ کر دیا جائے چند لوگوں کی ذہنیت غلط رہتی ہی ہے۔گڑبڑی کر نے والوںکا ساتھ دینے میں کچھ سرکاری مشینری کے لوگ بھی لگے ہیں ایسے لوگوں کے خلاف کارروائی ہو رہی ہے۔ پروگرام میں شامل لوگوں سے اپیل کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ ہر جگہ بجلی کے کھنبے پر ٹیلی فون نمبر لکھا ہوا ہے اس نمبر پر آپ گربڑی کر نے والوں کی اطلاع دے سکتے ہیں۔ اطلاع دینے والوں کا نام خفیہ رکھاجائیگا ۔ انہوں نے کہا کہ قتل کے معاملہ میں قانون بنا ہوا ہے ۔ جس کے تحت پھانسی اور تاعمر کی سزادی جاتی ہے اس لیے شراب بندی کے معاملہ میں آپ کی حساسیت مسلسل ضروری ہے ۔ سرکار اور قانون بھی اپنا کام کررہے ہیں ۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ کم سن کی شادی اور جہیز کی روایت کے خلاف مضبوط مہم چلائی جارہی ہے۔ کمسنی میں شادی اور جہیز کی روایت کو آپ تمام لوگ مل کر روکئے۔ جب آپ ذہن بنا لیں گے تو یہ ضروربند ہو جائیگا۔ پروگرام میں آئے لوگوں سے اپیل کر تے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ آپ تمام لوگ نہ جہیز لیں ، نہ جہیز دیں اور نہ جہیز لینے دینے والوں کی شادی میں شریک ہوں ،اس بات کا آپ عہد کریں تو یہ یقینا بند ہو جائے گا ۔ جہیز دینے کے خوف سے غریب لوگ اپنی بیٹی کی شادی کم عمر میں ہی کر دیتے ہیں ۔کم عمر میںشادی ہو نے پر دوران حمل یا تو وہ موت کی شکار ہو جاتی ہے یاپھر بچہ معذور یابونا پن کا شکار ہو جاتا ہے ۔ اس لیے اسے ہر حال میں روکئے ۔

وزیر اعلیٰ نے کہا کہ خواتین کی اختیار کاری کے لیے بہار پہلی ریاست ہے جہاں پنچایتی راج اور میونسپل کارپوریشن کے انتخاب میں عورتوں کو 50فیصد ریزرویشن دیاگیاہے ۔ خود مدد گروپ کی تشکیل کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ آج کل جھگڑا لگا نے والے بہت سرگرم ہو گئے ہیں ان سے ہوشیار رہئے ۔ ترقی کا پوار فائدہ اسی وقت ملے گا جب آپ سماجی میں امن ، بھائی چارہ اور محبت کے ساتھ رہیں گے ۔
وزیر اعلیٰ نے کہا کہ آج پھوہیا گھاٹ پر اعلیٰ سطح کے پل کی تعمیر کا کام شروع ہو گیا ہے ۔ انہوں نے کہا ہ جب ہم یہاں ہیلی کاپٹر سے اتر رہے تھے تو دیکھا کہ پھوہیا گھاٹ کے پورب پولیا اور درجیا دو الگ الگ پشتہ ہیں جسے ایک اعلیٰ سطح کے پل کے ذریعہ جوڑنے کا بھی ہم نے فیصلہ کیا ہے تاکہ پشتہ کے قرب و جوار میں رہنے والے لوگوں کو آمدو رفت میں سہولت مہیا ہو ۔ اس کے لیے بہت جلد انجینئر آکرڈی پی آر تیار کریںگے اور 26جنوری کے پہلے اس کی منظوری رورل ورک محکمہ کے ذریعہ لے لی جائے گی ۔پروگرام میں موجود لوگوں کو وزیر اعلیٰ نے دیوالی اور چھٹھ کی مبارکباد دی ۔
پروگرام کو بہار اسمبلی کے اسپیکر جناب وجئے کمار چودھری ، رورل ورک کے وزیر جناب سیلیش کمار ، عمارت تعمیرات کے وزیر جناب مہیشور ہزاری، ممبر پارلیمامنٹ رام ناتھ ٹھاکر ، ممبر پارلیمنٹ جناب چودھری محبوب علی قیصر ،ممبر اسمبلی راجکمار رائے اور رورل ورک محکمہ کے سیکریٹری جناب ونے کمار نے بھی خطاب کیا۔
اس موقع پر ممبر اسمبلی جناب ودھا ساگر نشاد ، ممبر اسمبلی رام بالک سنگھ، ممبر اسمبلی جناب ششی بھوشن ہزاری ، ممبر قانون ساز کونسل جناب رانا گنگیشر سنگھ ، سمستی پور ضلع پریشد چیئر مین محترمہ پریم لتا ، سابق ممبر پارلیمامنٹ اور جے ڈی یو ضلع صدر محترمہ اشمیش دیو ی ، بی جے پی ضلع صدر جناب رام سومیرن سنگھ ، وزیر اعلیٰ کے سیکریٹر جناب منیش کمارورما، دربھنگہ کمشنر جناب مینک بڑبڑے، آئی جی جناب پنکج کما ر دراد ، ڈی آئی جی ونود کمار، ڈی ایم جناب چندر شیکھر سنگھ ، ایس ایس پی محترمہ ہر پریت کور سمیت دیگر شخصیات موجودتھیں۔

۲

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close