سیاستہندوستان

تین طلاق پر پھر آرڈیننس لائے گیحکومت : وجے گوئل

نئی دہلی: شادی شدہخواتین کے حقوق کی حفاظت کے لئے تین طلاق سے متعلق بل کے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں منظور نہ ہو پانے کی وجہ سے حکومت اس پر پھر سے آرڈیننس لائے گی۔پارلیمانی امور کے وزیر مملکت وجے گوئل نے آج یہاں نامہ نگاروں سے بات چیت میں کہا کہ تین طلاق سے متعلق مسلم خواتین (شادی حقوق تحفظ) بل، 2018، میڈیکل کونسل آف انڈیا(ترمیمی) بل، 2018 اور کمپنی (ترمیمی) بل، 2019 لوک سبھا میں منظور ہو گئے مگر ان بل کو راجیہ سبھا سے منظور نہیں کرایا جا سکا۔ لہٰذا حکومت ان پر دوبارہ آرڈیننس لائے گی۔قابل ذکر ہے کہ تین طلاق اور میڈیکل کونسل پر آرڈیننس سال 2018 ستمبر میں اور کمپنی قانون میں ترمیم کے لئے آرڈیننس سال 2018 نومبر میں لایا گیا تھا۔ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں تینوں بل لوک سبھا میں تو پاس ہو گئے لیکن راجیہ سبھا میں ان بلوں کو منظور نہیں کیا جا سکا۔ قابل ذکر ہے کہ آرڈیننس لانے کے بعد حکومت کو اگلے پارلیمنٹ اجلاس میں اس سے متعلق بل منظور کرانا ہوتا ہے۔ ایسا نہ ہو پانے پر آرڈیننس خود بخود خارج ہو جاتے ہیں۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close