بہارمتھلانچل

جن ادھیکار پارٹی کی بیٹھک میں بی جے پی لیڈران پر کاروائی کا مطالبہ

دربھنگہ :بدھ کو محلہ فیض اللہ خاں واقع جن ادھیکار پارٹی کے ضلع صدر ڈاکٹر عبد السلام عرف منا خان کی صدارت میں ایک بیٹھک منعقد کی گئی ۔ جس میں دربھنگہ میں بڑھتے جرائم کے واقعات پر تشویش ظاہر کی گئی ۔ گذشتہ دن سنیل رائے کے قتل معاملہ کو لے کر ضلع صدر ڈاکٹر عبد السلام عرف منا خان نے کہا کہ بی جے پی والوں پر مقدمہ درج ہونا چائیے کیونکہ ان کی پشت پناہی میں دربھنگہ میں جرائم پھل پھول رہا ہے ۔ انہو ںنے یہ بھی کہا کہ سنیل رائے کا قاتل بھاجپائیوں کے تحفظ میں ہے ۔ اس کا فوٹو شیئر کیا جارہا ہے ۔ جن لیڈران کے ساتھ ان کا فوٹو وائرل ہوا ہے ان کے خلاف بھی کاروائی ہونی چائیے ۔ دربھنگہ ضلع انتظامیہ اور بہار سرکار کے مکھیا نتیش کمار سے اپیل کیا کہ بی جے پی کے تینوں لیڈران پر فوری طور پر قانونی کاروائی ہونی چائیے کیونکہ ان کے ساتھ وائرل فوٹو سے لوگ سہمے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے میڈیا کو بتایا کہ دربھنگہ کے نئے ایس ایس پی کا استقبال کرتے ہیں اور مطالبہ کرتے ہیں کہ جس طرح دربھنگہ میں جرائم میں بڑھوتری ہوئی ہے اور جس طرح جرائم پیشہ نے فیس بک پر آکر کرائم رپورٹر کا نام لیا ہے کہ اس کا قتل کرنا تھا اس سے ثابت ہوتاہے کہ جرائم پیشوں کا حوصلہ کتنا بلند ہوگیا ہے ۔ مسٹر خان نے کہا کہ اگر جرائم پیشوںپر فوری طور پر لگام نہیں کسا گیا اور کاروائی نہیں کی گئی تو کوئی بھی سماجی کارکن جو زمینی سطح پر کام کرتے ہیں ان کی زندگی کو خطرہ ہوسکتا ہے ۔ میڈیا کارکن کوتحفظ دیں اور جرائم پیشوں پر سخت کاروائی ہو۔ اگر کسی صحافی یا سماجی کارکن کے ساتھ کچھ غلط ہوتا ہے تو اس کیلئے سیدھے طور پر ذمہ دار پولیس انتظامیہ ہوگی ۔ دربھنگہ کے نئے ایس ایس بابو رام سے سفارش ہے کہ سنیل قتل واردات میں ملوث جرائم پیشوں کو فوری طورپر گرفتار کرکے سفیدپوش لیڈران اور زمین مافیاؤں کو بے نقاب کریں ۔ پارٹی کے یوتھ ضلع صدر راجیش کمار عرف چن من یادو ، ٹاؤن صدر خلیق الزماں عرف پپو ، پروفیسر گنگا پرساد یادو ، پتن بہاری ، چندر کانت سنگھ یادو ، رمیز علی خان ، کمار مشر ، توفیق خان ، سونو خان ، پرشانت جھا ، نفیس خان ، آصف شیخ ، نوشاد احمد وغیرہ موجود تھے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close