کھیل

خلیل احمد کو آئی سی سی سے سرزنش

نئی دہلی: ہندوستانی بائیں ہاتھ کے بولر خلیل احمد کو ممبئی میں کھیلے گئے چوتھے ون ڈے میں ویسٹ انڈیز کے کھلاڑی مارلون سیمئلز کو آؤٹ کرنے کے بعد قابل اعتراض جواب دینے کے لیے سرکاری طور پر بین الاقوامی کرکٹ کونسل (آئی سی سی) سے سرزنش کی گئی ہے اور ایک ڈيمیرٹ پوائنٹس بھی دیا گیا ہے۔
خلیل نے ویسٹ انڈیز کی اننگز کے 14 ویں اوور میں سیمئلز کو آؤٹ کیا تھا اور جب ونڈيز کھلاڑی واپس لوٹ رہے تھے تو کئی بار ان پر چلائے تھے ۔ اس میچ میں خلیل نے تین وکٹ نکالے تھے اور ہندستان نے 224 رن کے بڑے فرق سے جیت درج کی تھی۔ ہندستان پانچ میچوں کی سیریز میں اب 2-1 سے آگے ہے۔
ہندستانی کھلاڑی کو ان کے اس رویے کے لیے آئی سی سی کی ضابطہ اخلاق قوانین کے تحت لیول ون 1 کا قصوروار پایا گیا ہے جس میں انہوں نے قوانین 2.5 کی خلاف ورزی کی ہے۔ یہ اصول قابل اعتراض زبان، رویے یا غلط اشارے، جارحانہ ردعمل سے منسلک ہے۔
خلیل نے میچ ریفری کرس براڈ کی طرف سے لگائے گئے اس جرم کو قبول کر لیا ہے جس سے ان کے خلاف سرکاری کارروائی نہیں کی جائے گی۔ میدانی امپائر ایان گولڈ اور انل چودھری اور تھرڈ امپائر پال ولسن اور چوتھے امپائر سی شمس الدین نے خلیل کو موردالزام ٹہرایا تھا جس کے بعد براڈ نے ہندوستانی کرکٹر کے لیے یہ سزا سنائی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close