متھلانچل

راسپا قومی صدر کے ہاتھوں دربھنگہ میں ضلعی دفتر کا افتتاح

دربھنگہ :راشٹریہ سمتا پارٹی سیکولر کے دفتر کاافتتاح ڈاکٹر اجے سنگھ (المست ) کے ہاتھوں عمل میں آیا ۔ بیٹھک کی صدارت دربھنگہ ضلع راشٹریہ سمتا پارٹی کے نو منتخب صدر محمد انعام کی صدارت میں ہوئی اور نظامت کے فرائض پروفیسر انیل آزاد نے انجام دیا ۔ بیٹھک سے خطاب کرتے ہوئے قومی صدر المست نے لوگوں سے کہا کہ ملک میں متبادل کے طور پر راشٹریہ سمتا پارٹی سیکولر ہے ۔ قومی صدر نے کہا کہ ملک کی مالی ، تعلیمی حالت چوپٹ ہے ۔ بدعنوانی کا بول بالا ہے۔ کسان خود کشی کرنے پر مجبور ہیں ۔28؍اکتوبر کو پٹنہ کے گاندھی میدان میں زیادہ سے زیادہ تعداد میں آپ لوگ پہنچیں اور مرکز اور ریاست کی حکومت کو اپنی طاقت کا احساس دلائیں ۔ نشست سے خطاب کرتے ہوئے قومی جنرل سکریٹری وگیان سوروپ نے کہا کہ بغیر تعلیم ، صحت اور بے روزگاری سے لوگ پریشان ہیں ۔ لہذا تمام لوگ گاندھی میدان آنے کی دعوت دینے آپ کے شہر پہنچاہوں ۔ اس لئے ہزاروں کی تعداد میں شریک ہو کر پارٹی کو مضبوط بنائیں ۔ نشست سے خطاب کرتے ہوئے ونود کمار نشاد نے کہا کہ بلاک سے پنچایت سطح تک عوام کی شکایتوں کو دور کریں اور زمینی سطح پر پارٹی کیڈر تیار کریں اور ۲۸؍ اکتوبر کو کثیر تعداد میں پٹنہ پہنچیں ۔ اس موقع پر اوم پرکاش بند نے کہا کہ ملک میں روٹی کی قلت نہیں ہے ۔ کمی سوچ کی ہے ۔ بے روزگاری کے ہاتھوں کسان خود کشی کرنے پر مجبور ہیں ۔ قومی اقلیتی سیل صدر نور حسن نے کہا کہ اقلیتوںکو تمام پارٹیوںنے ٹھگا ہے اور تمام پارٹیوں اقلیت ووٹ بینک کی سیاست کرتی آرہی ہے ۔ اس بار 2019کیلئے ہوشیارہوجائیے ۔ پارٹی ریاستی جنرل سکریٹری مایا شریواستو نے خاتون استحکام پر روشنی ڈالا اور کہا کہ خواتین کی حصہ داری یقینی بنائی جائے اور زیادہ سے زیادہ خاتون کو آگے بڑھایا جائے ۔ بیٹھک سے خطاب کرنے والو ں میں پروفیسر انیل آزاد ، محمد امیر الحق ، پروفیسر راحت علی ، مقصود عرف منا جی ، محمد انعام وغیرہ نے خطاب کیا ۔ نشست میں عبد الطیف ، مرتضی راعین ، نظیر احمد ، آصف علی ، ورون کمار ،رفعت علی ، سیف علی ، راجو گپتا ، محمد عالمگیر ، محمد طیب اور ظفیر وغیرہ موجود تھے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close