ہندوستان

سالانہ امرناتھ یاترا: سینکڑوں عقیدت مند اور سادھو جموں پہنچ گئے

وادی کشمیر میں سطح سمندر سے 13 ہزار 500 فٹ بلندی پر واقع امرناتھ گھپا کی سالانہ یاترا کے رسمی آغاز سے دو روز قبل ہی سینکڑوں کی تعداد میں شردھالو اور سادھو جموں پہنچ چکے ہیں۔ انہیں (شردھالوں اور سادھوں کو) یاتری نواسن بیس کیمپ جموں اور رام مندر جموں میں پوجا پاٹ کی محفلوں اور ’بم بم بولے‘ و’ہر ہر مہادیو‘ کے نعرے لگانے میں مصروف دیکھا جاسکتا ہے۔امسال یاترا کا پہلا قافلہ 27 جون کو جموں کے یاتری نواسن (بیس کیمپ)سے وادی کشمیر کی طرف روانہ ہوگا۔ سالانہ امرناتھ یاترا 26اگست کو رکھشا بندھن کے تہوار کے موقع پر خصوصی پوجا کے ساتھ اختتام پزیر ہوگی۔ رام مندر کے مہنتھ رمیشور داس نے امید ظاہر کی کہ امسال سالانہ یاترا ایک پرامن ماحول میں اپنے اختتام کو پہنچے گی۔

انہوں نے بتایا ’انتظامیہ کی طرف سے یاتریوں کے لئے تمام طرح کے انتظامات کئے گئے ہیں۔ یہاں سے یاتریوں کی روانگی کا سلسلہ بدھ کے روز سے شروع ہوگا۔ جمعرات کو یاترا کا باقاعدہ آغاز ہوگا۔ یاترا ایک پرامن ماحول میں ہوگی۔ اس میں لاکھوں کی تعداد میں یاتری اور سادھو حصہ لیں گے‘۔ رام مندر میں گذشتہ چند دنوں سے مقیم ایک سادھو نے کہا ’میں گذشتہ پچیس برسوں سے مسلسل امرناتھ جی کی یاترا پر آرہا ہوں۔

یہاں کی مقامی انتظامیہ بہت ہی اچھے انتظامات کرتی ہے۔ ہمیں کسی سے کوئی ڈر نہیں لگتا ہے۔ ہمیں رام مندر پہنچنے پر ایسا محسوس ہوتا ہے کہ جیسے ہم بابا برفانی کے دربار میں پہنچ گئے‘۔ ایک خاتون شردھالو نے کہا کہ امرناتھ یاترا پر آنا میرا ایک دیرینہ خواب تھا۔ اُن کا کہنا تھا ’میں بابا برفانی کے درشن کے لئے پہلی بار یہاں آئی ہوں۔ بابا برفانی کی یاترا کرنا میرا ایک خواب تھا۔ یہاں ہمارے لئے ہر ایک سہولیت دستیاب رکھی گئی ہے۔ کسی چیز کی کوئی کمی نہیں ہے‘۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close