بہارمتھلانچل

سرکار کی دوہری نیتی مدارس کے نیوجت اساتذہ کے تئیں:عصمت آرا

دربھنگہ :آج دربھنگہ کے نمائندہ شاداب انجم سے فون پر عصمت آرا نے کہا کی مدرسہ اساتذہ کے مسائل کو لیکر ہمیشہ سرکار کی دوہری پالیسی رہی ہے جبکہ سرکار ہی نوٹیفکیشن جاری کر تی ہے کہ مدارس کے اساتذہ کو وہ ساری سہولیات فراہم کرائی جائیںگے جو اسکول کے اساتذہ کو دی جائیگی افسوس ہے حکومت بہار پر کے وہ اپنے کئے ہوئے نوٹیفکیشن 162\1010\1011 سے مکرتے ہوئے نظر آرہی ہے بہر کیف اب ہم نیوجت اساتذہ کو مثبت قدم اٹھانے کی ضرورت ہے متحد ہو کر ایک پلیٹ فارم سے کام کریں ورنہ یہ کام اسوقت تک نہی ہوگا جب تک متحد نہ ہوجائیں اب آخری لمحہ ہم سے گزرتا ہوا نظر آرہا ہے اور یہ بہت نازک وقت ہے لیکن اب انتظار کی گھڑی ختم ہوتی جارہی ہے 1ستمبر کے بعد ایک میٹنگ طلب کی جائے اور مشورہ لیکر دھرنا پر بیٹھ جائیں تبھی ورنہ در در کی ٹھوکریں کھاتے رہیں گے۔ سرکار کی گنتی نیت کی انتہا یہ کہ ہر شعبے سے سنویدا ملازم (جو ایک خاص مدت تک کیلئے فکس تنخواہ پر بحال ہوئے تھے) کو پے اسکیل دینے کا اعلان کیا سوائے مدارس و سنسکرت اساتذہ وملازمین کو چھوڑ کر میں اساتذہ کوحکومت بہار کو توجہ مبذول کراتے ہوئے کہنا چاہتی ہوں کہ آپ کسی یونین کے ساتھ رہیں کوئی ہمیں پریشانی نہی لیکن جب ہمارے پے اسکیل کے مسئلہ کو لیکر ایک ایک پلیٹ فارم پر اکٹھا ہونے کی ضرورت پیش آئے تو اکٹھا بھی ہوں سچ اور فکر کو بدل نے کی ضرورت ہے اگر اب بھی نہ بدلے تو ہمیں بدل دیا جائے گا اسکی ایک جیتی جاگتی مثال حال ہی میں پیش آیا وہ ہے فوقانیہ سے انگریزی کو سلبیس سے الگ کردینا اسکا بہت بڑا خسارہ ہے اگر ہمارے طلبہ وطالبات ڈاکٹر یا انجینئر یا کسی دوسرے شعبے میں داخلہ لینا چاہیں تو نہی لے سکتے ہمیں سمجھنے کی ضرورت ہے رفتہ رفتہ ہمیں تعلیم سے دور کردیا جائے گا میں اپنے اساتذہ سے گزارش کرتی ہوں کہ ایک پلیٹ فارم سے کام کریں اورا ہم ذمہ داروں سے کہیں کہ نتہا ہوگئی اسکا ہمیں نعم البدل چاہئے اسکی کیا صورت ہوگی ذمہ داروں کو غور کرنے کی ضرورت ہے

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close