سیاستہندوستان

سیتا رمن نے ایچ اے ایل کو پروجیکٹ دینے کے بارے میں پھر جھوٹ بولا: راہل گاندھی

نئی دہلی: کانگریس صدر راہل گاندھی نے پیر کو وزیر دفاع نرملا سیتا رمن کو ایک بار پھر ہندوستان ایرونیکس لمیٹڈ (ایچ اے ایل) کو لے کر پارلیمنٹ میں جھوٹا بیان دینے کا الزام لگایا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ وزیر دفاع دعویٰ کر رہی ہیں کہ ایچ اے ایل کی حکومت مدد کر رہی ہے جبکہ اس کی حالت بالکل اس کے الٹ ہے۔
کانگریس صدر نے پارلیمنٹ میں صحافیوں سے بات چیت میں کہا کہ وزیر دفاع نے ایوان میں ایک بار پھر جھوٹ بولا ہے۔ وزیر دفاع نے پہلے کہا تھا کہ ایچ اے ایل کوایک لاکھ کروڑ روپے دیے گئے تھے۔ کانگریس نے ان کے اس دعوے کو چیلنج کیا۔ آج وزیر دفاع نے کہا کہ 26570.80 کروڑ روپے ایچ اے ایل کو دیے گئے۔ نرملا سیتا رمن نے پارلیمنٹ میں جھوٹ بولا ہے۔راہل نے کہا کہ دی سالٹ کی طرف سے بھارت کو ایک بھی ہوائی جہاز دیئے بغیر حکومت نے انہیں 20 ہزار کروڑ روپے دیئے ہیں۔ ادھر حکومت نے ایچ اے ایل کی مکمل ہو چکی منصوبوں کا بھی 15700 کروڑ روپے ابھی تک نہیں دیا ہے۔
راہل نے کہا کہ وہ ایچ اے ایل کے عملے سے ملے ہیں۔ ملازمین کا کہنا ہے کہ حکومت انہیں پروجیکٹ نہیں دے رہی ہے۔ حکومت ایچ اے ایل کو کمزور کر رہی ہے۔ ادھر، صنعتکار انل امبانی جنہوں نے کبھی کوئی ہوائی جہاز نہیں بنائی ان کی دفاعی پروجیکٹ دے رہی ہے۔
انہوں نے کہا کہ ایک بار پھر نرملا سیتا رمن نے پارلیمنٹ میں جھوٹ بولا ہے۔ انہوں نے پارلیمنٹ میں بس سیدھا سوال پوچھا ہے کہ کیا حکومت کے رافیل پر نیا سودا طے کرنے پر وزارت دفاع اور فضائیہ کے حکام نے اعتراض ظاہر کیا تھا۔ انہیں اس کا جواب ہاں یا نہیں میں چاہئے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close