پٹنہ

سید نا امیر ابوالعلا کی تعلیما ت نے عر فانی و ایمانی دنیا میں نئی زند گی پید اکر دی:منعمی

خانقاہ منعمیہ میں عر س کی پاکیزہ مجلس فیضان میں ڈوبی

پٹنہ :حضرت سید نا امیر ابوالعلااحراری اکبر آبادیؒ کی تعلیما ت اور تربیا ت نے احسانی ،عر فانی اور ایما نی دنیا میںنئی زندگی پید اکر دی۔اکا بر کی دھند لی یا دیں پھر زند ہ وتابند ہ ہو گئیں۔صالحین ، صدیقین اور اکا بر کی کا میا ب صحبت کے فوائد زمین پر حقیقت بن کر ابھر آئے ۔ ایسے نا د ر روز گا رخلفا ء اور پھر ان کے بھی فخر روز گا ر خلفا ء نے اس سلسلہ کے فیضان کا ہر طالب مخلص کو متمنی بنا دیا ۔سا معین کو مخا طب کر تے ہو ئے حضرت سید شاہ شکیل عظیمی منعمی نے مزید فرمایا کہ حضرت مخدو م منعم پاک کی عظیم آبادآمد نے اس سلسلہ کا مرکز بہا ر کو بنا دیا ۔ ابو العلا ئی نعما ت وکیفیات کے طلبگا ر ملک کے کو نے کو نے سے بہا رکا رخ کر نے لگے اور اس بر صغیر میں سلسلہ ابوالعلائیہ نے بز م فقر ودر ویشی کو نئی زینت اور نئی بہا رعطا فرمائی ۔حضرت سید نا امیر ابو العلا نسباً اور نسبتاً دونوں اعتبار سے احرار ی ہیں۔ ان کا سلسلہ نسب عظیم نقشبند ی بزر گ حضرت خوا جۂ خواجگا ن سید نا عبید اللہ احرار سے جا ملتا ہے ، جو عظیم عالم ربانی شاعر لاثانی ملا جامیؔ اور ملا واعظ کا شفی کے پیر و مر شد ہیں۔ حضرت خواجہ احرار ،بابر اور اس کے باپ عمر مر زاکے بھی پیر ہیں۔ حضرت سید نا امیر ابوالعلااحرار یؒ عہد جہا نگیر کے کا میا ب ترین مبلغ اسلام اور مقبول ترین شیخ زمانہ ہیں ۔ شاہ ولی اللہ محدث دہلوی کے والد ماجد شاہ عبدالرحیم بھی سید نا کے خلیفہ ملا ولی محمد کے فیض یا فتہ اور خلیفہ تھے ۔ علما ئے کالپی ومار ہر ہ وبد ایوں و بریلی میںابو العلائی فیضان سے مالامال رہے ہیں۔بہا ر کی بھی قدیم ترین خانقاہیں ابوالعلائی فیضان سے اپنی کیفیت کو دوآتشہ بنا نے میں کسی سے پیچھے نہ رہیں ۔ خانقاہ بہار شریف، شیخ پور ہ ،دانا پور ،پھلواری سب اس سلسلہ کے فیضا ن سے مالا ما ل ہو ئیں۔ عظیم آباد کے ایک نا بغہ روز گا ر شاعر یحییٰ عظیم آبادی نے بزبان فارسی 500صفحات کا دیوان ’’فتوحات شوق ‘‘ صر ف حضرت سیدنا کی مد ح ومنقبت میں یا دگارچھوڑا ہے ۔ حضرت مخدوم جہاں کے سجا دہ نشیں جناب حضور شاہ امین احمد ثبات فردوسی منعمی ابو العلائی نے اپنی ایک طویل فارسی مثنوی’’ گل بہشتی‘‘ سید نا کی تعر یف وتوصیف میں نظم فرمائی ۔
عر س کے موقع پر جا معہ کے طلباء نے بھی حضرت سید نا کی تعلیما ت وخدمات پر مضامین پڑ ھے اور منقبتیں پیش کیں ۔ قل وفاتحہ ایصال ثواب اور مجلس سما ع کے بعدیہ نورانی مجلس دعا پر تمام ہوئی جس میں بڑ ی تعداد میں ائمہ مساجد ، اساتذہ وعلماء ومشایخ اور عوام وخواص نے شرکت فرمائی اور فیضان ابوالعلائی سے مالامال ہوے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close