متھلانچل

شراب کارو بار کیلئے دوگروہ میں مار پیٹ کے بعد گھنٹوںسڑک جام

دربھنگہ : لہریا سرائے تھانہ حلقہ کے بیلوا گنج محلہ میں غیر قانونی شراب کاروبار کے مسئلہ پر سوموار کو دو گروپ آمنے سامنے آگئے جس سے مشتعل لوگوں نے ایک لہریاسرائے دربھنگہ شاہراہ کو نرسنگ ہوم کے سامنیٹائر جلا کر جام کر دیا اور انتظامیہ کے خلاف نعرہ بازی شروع کردی۔ اطلاع کے مطابق رتن پرساد کے فرزند مونو کمار محلہ میں اپنے گھر سے ہی غیر قانونی شراب کی تجارت کیا کرتا تھا،جس سے پڑوسیوں میں ناراضگی پائی جارہی تھی اور لوگ مونو کی مخالفت بھی کیا کرتے تھے۔ لوگوں کی مخالفت اور پولیس کا بڑھتا دباؤ دیکھ مونو ایک کارٹوں شراب محلہ میں ہی پھینک کر فرار ہوگیا۔ موقع سے کارٹون میں پھینکی گئی شراب کے علاوہ اسکول بیگ میں ایک سیلون کے ارد گرد سے 60بوتل شراب ضبط کی گئی۔ قابل ذکر ہے کہ اندھریا باغ محلہ میں مذکورہ معاملہ کو لے کر سوموار کو مار پیٹ بھی ہوئی تھی ،جس میں مہیش مہتو کی اہلیہ جانکی دیوی، سیتا دیوی، سورج کمار اورمہیش مہتو شدید طور سے مجروح ہوگئے تھے جسے ڈی ایم سی ایچ میں داخل کرایا گیا ہے۔ ڈاکٹروں نے مہیش مہتو کی اہلیہ جانکی دیوی کو بہتر علاج کے لیے پی ایم سی ایچ ریفر کردیا ہے۔ لہریا سرائے تھانہ کی پولیس نے آر کے شرما کی قیادت میں اور دنگا پارٹی نے موقع پر پہنچ کر جام کو ختم کروایا اور غیر قانونی شراب کاروباری مونو کمار کی ماں آشا دیوی زوجہ رتن پرساد کو گرفتار کر تھانہ پر لے گئی۔ جہاں اس سے پوچھ گچھ کی جاری ہے۔ تھانہ انچارج آر کے شرما نے بتایا کہ اسپتال میں زیر علاج لوگوں کی جانب سے بیان درج کرائے جانے پر مقدمہ درج ہوگا۔ وہیں شراب تاجر کے علاوہ سیلون مالک بھی اس معاملہ میں نامزد کئے جائیں گے ہیں ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close