متھلانچل

شریف لوگ اندھیرے میں کھو گئے شاید ٭گنہگار بہت روشنی میں رہتا ہے

بزم رہبر کی 199ویں ماہانہ شعری نشست کا انعقاد

دربھنگہ :بزم رہبر کی 199ویں ماہانہ شعری نشست کا انعقاد بزم رہبر کے دفتر ریاض منزل کرم گنج میں بزم کے بانی مرحوم فاروق اعظم انصاری کی رہائش گاہ پر منعقد ہوئی ۔ پروگرام کی صدارت بزرگ شاعر زمان برداہوی نے فرمائی اور نظامت کے فرائض منظر رینڈھوی نے انجام دئیے ۔ اس موقع پر بزم کے سرپرست الحاج صدر الحسن عطار نے مہمانوں کا استقبال کیا ۔ سامعین کے طور پرفیاض علی ، ریاض علی ، جواہر انصاری ، محمد مارشل ، نسیم احمد رفعت مکی وغیرہ موجود تھے ۔ شعراء کے پسندیدہ کلام مندرجہ ذیل ہیں ۔
ڈاکٹر منور راہی
کوئی غم گر ملے تم کو
اس کو میرا پتہ دینا
حسین منظر
شریف لوگ اندھیرے میں کھو گئے شاید
گنہگار بہت روشنی میں رہتا ہے
منظر رینڈھوی
ہاتھ دیتے ہوئے دیکھے ہیںکنارے سے بہت
کوئی دیکھا نہیں دریا میں اترنے والا
ڈاکٹر مستفیض احمد عارفی
نفرتوں کے اس بھنور میں ناخدا بن کر دیکھا
قصر سلطانی سے آگے اب گھٹا باطل میں ہے
منظر صدیقی
اپنے ہوں یا پرائے مجھے سب عزیز ہیں
جبکہ میں جانتا ہو یہ دور وفا نہیں
انام الحق بیدار
پلٹ پلٹ کے جہاں سے چلا وہیں آیا
عذا ب ہوگیا اپنا ہی نقش پا مجھ کو
زمان برداہوی
تو دکھادے مجھ کو وہ در کہ پھر کسی اور در پہ نظر نہ ہو
مرا سر جھکے تو وہیں جھکے کسی اور در پہ سر نہ ہو
ڈاکٹر نور محمد عاجز
ایک ہی شاخ چمن کیوں برق کو محبوب ہو
اور میرا ہی آشیانہ معاملہ گھمبیر ہے
حامد حسین ناچیز
ہر طرف چھا گیا ہے اندھیرا
راستے کا پتہ نہیں چلتا
شباب رہبر
زندہ قاسم ہیں نہ اکبر اور نہ اب میرے چچا
چبھتا ہے ثمربندہ میرے باباکیا کروں
عرفان احمد پیدل
اس ملک کا قانون سخت ہونا چائیے
دوستوں یہ سلسلہ ہر روز ہونا چائیے
لڑکیوں کے ساتھ بابا جو بھی پکڑے جاتے ہیں
بیچ چوراہے پر سولی ہونا چائیے
جنید عالم آروی
دیکھ کر موجھ کو اٹھتے ہوئے کشتی میری
کتنی بے چین ہے دریا میں اترنے کیلئے

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close