فلم

فلم میکرس نے کہا، فلم ‘کیدارناتھ’ میں کچھ بھی قابل اعتراض نہیں

ممبئی : سشانت سنگھ راجپوت اور سارہ علی خان کی اداکاری والی فلم ‘کیدارناتھ’ کے میکرس نے صفائی دی ہے کہ اس میں لو جہاد کو فروغ دینے جیسا کچھ بھی نہیں ہے۔ فلم ‘کیدارناتھ’ پر بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے ایک لیڈر نے اس طرح کا الزام لگاتے ہوئے اس پر پابندی کا مطالبہ کیا تھا۔ فلم کے میکرس نے پیر کے روز کہا کہ فلم میں کچھ بھی قابل اعتراض نہیں ہے۔ ہمارا مقصد کسی کمیونٹی کے جذبات کو ٹھیس پہنچانا نہیں ہے۔
اس فلم کے فلم سازرونی اسکرووالا اور ہدایت کار ابھیشیک کپور نے کہا کہ اس معاملے میں آج تک کسی نے بھی ان سے رابطہ نہیں کیا۔ اس موضوع کے لئے سینسر بورڈ واحد ادارہ ہے۔ نامہ نگاروں سے بات چیت میں انہوں نے کہا، ہم سب تخلیقی لوگ ہیں۔ ہم سب پہلے ہندوستانی ہیں اور ہمیں نہیں لگتا کہ فلم میں کچھ بھی قابل اعتراض ہے۔
قابل ذکر ہے کہ کچھ دن پہلے دہرادون کی بی جے پی میڈیا تعلقات ٹیم کے رکن اجیندر اجے نے مرکزی فلم سرٹیفیکیشن بورڈ (سی بی ایف سی) کے صدر پرسون جوشی کو ایک خط لکھا تھا۔ خط میں کہا گیا تھا کہ بدترین انسانی آفات میں ایک کے پس منظر پر مبنی ہونے کے باوجود فلم ہندو جذبات کا مذاق اڑا رہی ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close