پٹنہ

قلم کے دھنی ہری ونش کی اصل شناخت ’’ایمانداری اور سخت محنت‘‘

پٹنہ،حقیقی زندگی میں تنازعات سے دور اور نرم گفتار راجیہ سبھا کے نو منتخب ڈپٹی چیئرمین ہری ونش نارائن سنگھ نے سخت محنت اور یمانداری کو کامیاب زندگی کی بنیاد بنایا ہے۔ اتر پردیش کے بلیا میں 30 جون 1956 میں پیدا ہوئے ہری ونش نارائن سنگھ کو عوامی طور سے ہری ونش کے نام سے جانا جاتاہے۔ مسٹر ہری ونش نے بنارس ہندو یونیورسٹی سے معاشیات میں پوسٹ گریجویٹ کیاہے۔ ساتھ ہی انہوں نے صحافت میں بھی پوسٹ گریجویٹ ڈپلوما کیاہے۔ وہ انقلابی رہنما جے پرکاش نارائن کے گاوں سارن ضلع کے سیتاب دیارہ کے اصل باشندہ ہیں اوروہ ہمیشہ کہتے رہے ہیں کہ جے پی تحریک نے ان کی صحافت پر گہرا اثر چھوڑا ہے۔ مسٹر ہری ونش نے ایک انٹر ویو کے دوران بتایا تھاکہ انہوں نے 500روپے ماہانہ تنخواہ کے ساتھ اپنا کیریئر شروع کیاتھا اور وہ25 سال سے زائد وقت تک ہندی روزنامہ ’’پر بھات خبر‘‘ کے چیف ایڈیٹر تھے۔
بہار میں حزب اقتدار جنتا دل یونائٹیڈ نے انہیں سال 2014 میں بہار سے راجیہ سبھا بھیجا تھا۔ جنتا دل یو ممبر پارلیمنٹ ہری ونش وزیراعلیٰ کے کافی قریبی مانے جاتے ہیں۔ پربھات خبر کے ساتھ وابستہ ہونے سے قبل مسٹر ہری ونش ٹائمس گروپ کے میگزین ’’دھرم یگ‘‘ کے سال 1991تک ڈپٹی ایڈیٹر بھی تھے۔ انہوں نے سال 1981سے لیکر 1984 تک بینک آف انڈیا میں ملازمت کی۔ وہ اکتوبر 1989 تک رویوار میگزین کے معاون مدیر بھی تھے۔ مسٹر ہری ونش سابق وزیراعظم کے ایڈیشنل میڈیا مشیر بھی تھے۔ اسکے لئے انہوں نے پربھات خبر کے چیف ایڈیٹر کا عہدہ چھوڑ دیا تھا۔ حالانکہ کانگریس کے چندرشیکھر حکومت سے حمایت واپس لینے کے بعد وہ پھر واپس پربھات خبر لوٹ آئے تھے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close