کھیل

مجھے اپنے 10 ہزاری بننے پر فخر ہے: وراٹ

وشاکھاپٹنم:ہندوستانی کرکٹ ٹیم کے کپتان وراٹ کوہلی نے ویسٹ انڈیز کے خلاف ٹائی رہے دوسرے ون ڈے میچ میں اپنی سنچری اور 10 ہزاری بننے کی کامیابی پر خوشی اور فخر کا اظہار کیا ہے۔
وراٹ نے میچ میں ناٹ آؤٹ 157 رنز کی اننگز کھیلی تھی اور مین آف دی میچ بنے۔ لیکن اس اننگز کا 81 واں رن بنانے کے ساتھ ہی وہ ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹ میں سب سے تیز رفتار 10 ہزار رن بنانے والے بلے باز بن گئے اور اس معاملے میں انہوں نے عظیم کھلاڑی سچن تندولکر کو بھی پیچھے چھوڑ دیا۔
انہوں نے اپنے 10 ہزاری بننے کو لے کر کہاکہ میں میچ میں اپنی اننگز اور 10 ہزار رن پورے کرنے کی کامیابی پر بہت خوش ہوں اور مجھے اس پر فخر ہے۔
کپتان نے میچ کے بعد کہاکہ مجھے لگتا ہے کہ یہ بہت دلچسپ میچ رہا۔ ہمیں ونڈيز کو بھی میچ ٹائی کرانے کے لیے مکمل کریڈٹ دینا چاہیے جنہوں نے میچ میں پوری جان لگا دی۔ انہوں نے صرف 78 رن پر تین وکٹ گنوانے کے باوجود میچ ٹائی کرایا۔ شمرون هتمائر اور شاي ہوپ کی اننگز بہترین رہی۔
29 سالہ بلے باز نے میچ میں تمام کھلاڑیوں کی کارکردگی کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ ہم نے پہلے بلے بازی کو لے کر پہلے ہی طے کیا تھا کیونکہ یہاں پر موسم گرم ہے اور بڑے میچوں میں دفاع کرنا آسان ہے۔ عالمی کپ میں بھی آپ پہلے اسکور کریں اور پھر اس کا دفاع کریں۔ لیکن دوسری اننگز میں پچ بالکل مختلف تھی۔
انہوں نے کہاکہ ہم اپنی اننگز میں 275-280 کے اسکور کے بارے میں سوچ رہے تھے لیکن پچ کی وجہ سے ہمیں کچھ اضافی رنز مل گئے۔ ہمارے لیے میچ مشکل تھا لیکن ہم خوش قسمت ہیں کہ میچ ٹائی رہا اور ہم ہارے نہیں۔ جب رن ریٹ چھ کے نیچے چلا گیا تب ہمیں لگا کہ ونڈيز اچھی حالت میں ہیں لیکن کلدیپ یادو کو وکٹ مل گیا۔
ہندستانی گیند بازوں کی تعریف کرتے ہوئے وراٹ نے کہاکہ يجویندر چہل نے بہت اچھی بولنگ کی جبکہ امیش یادو اور محمد سمیع نے میچ کو آخر تک ختم کیا۔ امیش پر لیکن ایک باؤنڈری اور آخر میں ایک باؤنڈری سے کچھ گڑبڑ ہو گئی۔ لیکن میچ ایسے ہی ہوتے ہیں۔ ہم سب کو صرف میچ کا مزہ لینا چاہیے۔ مجھے اس میچ میں بہت مزہ آیا اور ویسٹ انڈيز یقینا اس میچ کو ڈرا کرنے کا حقدار ہے۔
ٹیم مجموعہ کو لے کر جدوجہد کر رہی ہندوستانی ٹیم کے کپتان نے امباٹي رائیڈو کی تعریف کرتے ہوئے کہاکہ وہ ایک پیشہ ور کرکٹر ہیں اور وہ ان کھلاڑیوں میں ہیں جنہیں ہم مستقل طور پر نمبر چار پر دیکھنا چاہتے ہیں۔ وہ اسپن کو بہت اچھی طرح کھیلتے ہیں اور اب بہترین تال اور فارم میں ہیں۔
وراٹ نے ویسٹ انڈیز کو شکست سے بچانے کے لیے هتمائر اور شائي کی بھی جم کر تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ شائي کو هیڈنگلے میچ سے ہی دیکھ رہے ہیں اور وہ کئی شاندار شاٹس کھیلے جبکہ هتمائر بھی اچھے بلے باز ہیں۔ ویسٹ انڈیز کو ملے 322 رن کے بڑے ہدف کے لیے شائي نے ناٹ آؤٹ 123 رنز اور هتمائر نے 94 رنز کی اننگز کھیل ٹیم کو شکست سے بچایا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close