متھلانچل

مفتی محلہ امام باڑہ میں مکتب تعلیم القرآن کا قیام عمل میں آیا

دربھنگہ : ماس کے زیر اہتمام امام باڑہ مفتی محلہ میں مکتب تعلیم القرآن کا قیام عمل میں آیا جس کا افتتاح وارڈ کاؤنسلر محترمہ مدھوبالا سنہا کے ہاتھوں سے ربن کاٹ کر ہوا اس موقع پر جناب نوین سنہا جو اس علاقے اور شہر دربھنگہ کے پر دلعزیز شخصیت ہیں موجود تھے ۔ان کے علاوہ مولانا نذیر عثمانی صاحب امام وخطیب شاہی جامع مسجد مفتی محلہ م،محمد مقبول ،محمد شبیر ،محمد کلیم ،نثار احمد ،حامد قریشی ،محمد تاج ،ممتاز قریشی ،محمد حلیم ما س کے ارکان میں حاجی ارشاد عالم ،حافظ منہاج الاسلام خاں،ڈاکٹر شارق رضا ،ظفر کریم جاوید ،ڈاکٹر بدر عالم خاں،عرفان احمد،مولانا احمد حسین ،مدرسہ مدینۃ العلوم کے جملہ اساتذہ انجنیر حسن ارشد شریک تقریب رہے۔مقامی نوجوان قائد محمد عمر مذکورہ مکتب کے لئے مستقل سرگرم رہے اور تقریب کو کامیاب بنانے میں ماس کے ممبران کو ہر طرح تعاون دیا ۔محترمہ مدھوبالا سنہا کی صدارت میں عزیزی معاذ ضیا متعلم مدرسہ مدینۃ العلوم کی تلاوت کلام پاک سے پروگرام کا آغاز ہوا بعد ازاں محمد معاذ بیگ ،معاذ ضیااور کاشف عثمانی نے بالترتیب حمد ،نعت ،نظم پیش کیا ۔محمد نواللہ صدر ماس نے ماس کا تعارف کراتے ہوئے تمام مہمانان کا استقبال کیا ۔مولانا نذیر احمد عثمانی نے اپنے خطاب میں محترمہ مدھوبالا سنہا اور نوین سنہا کا اس علاقہ کی ترقی کے لئے تعاون دینے کا شکریہ ادا کیا اور تعلیم کی اہمیت پر روشنی ڈالی۔ڈاکٹر بدر عالم خاں نے فرمایا کہ آزادی حاصل کرنے کے لئے جس طرح ہندو مسلم ایک ہو کر لڑے اسی طرح آج دونوںکو ایک ساتھ مل کر سماج کو فرقہ پرستی ،تعصب اور دیگر اختلافات کی غلامی سے نجات دلانے کی کوشش کرنی ہوگی ۔جناب نوین سنہا صاحب نے علاقہ کے لوگوں کی ان کے تئیں محبت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ میں اپنی ذات سے ہر ممکن خدمت کرتارہوں گااور محبت کا رشتہ مضبوط سے مضبوط تر ہوگا ۔ماس کی سماجی خدمت کی تعریف کرتے ہوئے ماس کے لوگوں کی ہمت افزائی کی اور یقین دلایا کہ ہر قدم پر وہ مجھے اپنے ساتھ پائیں گے۔اپنی فراخ دلی مظاہرہ کرتے ہوئے انہوں نے اعلان کیا کہ اپنی جانب سے تمام بچوں کو یونیفارم فراہم کریں گے اور مستقبل میں امام باڑہ کی عمارت کو تین منزلہ بنایا جائے گا ۔مدھوبالا سنہا نے اپنی صدارتی خطبہ میں غریب بچوں کی تعلیم کے لئے کی جانے والی کوشش کو سراہا اور ہر طرح کے تعاون کا یقین دلایا ۔فی الوقت امام باڑہ کے لئے ایک الماری دینے کا وعدہ کیا۔اس مکتب میں داخلہ لینے والے تقریبا دوسوبچوں میں سے منتخبہ بچوں کے درمیان محترمہ مدھوبالاسنہا ،نوین سنہا ،مولانا نذیر احمد عثمانی ،ڈاکٹر بدرعالم خاں مولانا احمد حسین کے ہاتھوں تعلیمی کٹ تقسیم کی گئی ۔مولانا نذیر احمد عثمانی کی دعا کے بعد اریب الزماں نے قومی ترانہ پیش کیا اور پروگرام کی نظامت کررہے مفتی ارشاداحمد نے سب لوگوں کا شکریہ ادا کرتے ہوئے پروگرام کے اختتام کا اعلان کیا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close