اتر پردیشہندوستان

مودی نے رات میں دورہ کرکے دیکھی وارانسی کی ترقی کی حقیقت

وارانسی، 15 جولائی وزیر اعظم نریندر مودی نے اربوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں کی سوغاتیں دینے کے بعد دیر رات مندر جاکر بابا بھولے ناتھ کی پوجا کی اور شہری علاقے میں تقریبا 35 کلو میٹر کا دورہ کرکے ترقی کی حقیقت دیکھی۔ مسٹر مودی نے اپنے دو روزہ وارانسی دورے کے پہلے دن ہفتہ کی شب بلٹ پروف گاڑی سے گھوم کر بدلتے شہر کی تصویر دیکھی۔ وزیر اعظم نے گاڑی کی اگلی سیٹ پر بیٹھ کر شہر کا دورہ کیا اور اپنے پارلیمانی حلقہ میں گزشتہ چار رسوں کے دوران ہونے والے کئی اہم ترقیاتی کاموں کو انتہائی قریب سے دیکھ کر حیرت زدہ رہ گئے ۔ دورہ کے دوران ان کے ساتھ وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ بھی موجود تھے ۔اس سے پہلے مسٹر مودی نے وارانسی کے راجاتالاب میں جلسے سے خطاب کیا اور ڈیریکاگیسٹ ہا¶س میں پارٹی کی طرف سے منعقد ایک پروگرام میں حصہ لیا۔ تقریبا پانچ سو شخصیات کی موجودگی میں وارانسی میں چار سال میں ہوئے ترقیاتی کاموں سے متعلق کتابچہ’میری کاشی‘اور ڈا کیومنٹری تصا ویر جاری کی گئی۔مسٹر مودی، گورنر رام نا ئک اور ریلوے کے وزیر مملکت منوج سنہا کی موجودگی میں مسٹر یوگی نے کتاب کا اجراکیا ۔ڈیریکا گیسٹ ہا¶س میں تھوڑا آرام کے بعد مسٹر مودی کاشی ہندو یونیورسٹی (بی ایس یو) کیمپس پہنچے ، جہاں انہوں نے کاشی وشو ناتھ مندر میں باقاعدہ بابا بھولے ناتھ کو دودھ کا غسل دیا ۔انہوں نے بلٹ پروف گاڑی میں بیٹھ کر سفر کرتے ہوئے رنگ برنگی روشنیوں سے نھائے مندر اور دیگر عمارتوں کو قریب سے دیکھا۔بی ایچ یو کے کیمپس میں داخل ہوتے ہوئے مین گیٹ پر نصب بھارت رتن مھامنا پنڈت مد ن موہن مالویہ کی مورتی کو آتے جاتے نمن کیا۔مندر میں پوجا ارچنا کے دوران یونیو ر سٹی کے وائس چانسلر پروفیسرراکیش بھٹناگر کے علاوہ یہاں کے پرو فیسر چندرمو ل اپادھیائے اور چیف پراکٹر پروفیسروینا سنگھ بھی موجود تھیں۔مسٹر مودی مھامنا کی بگیا دیکھنے کے بعد روندرپور¸ میں واقع اپنے پارلیمانی دفتر کے ارد گرد ہیریٹیج سے متعلق کاموں کو دیکھا۔ انہوں نے قدیم شری کاشی وشوناتھ مندر کے ارد گرد کے علاقے کا دورہ کیا۔ گودولیہ چوراہا، چوک، میداگن، کبیر چورا، لھرابیر، تلیا باغ، اندھراپل، ندیسر ہوتے ہوئے کچہری واقع امبیڈکر پارک پہنچے ۔وہاں سے لوٹتے وقت انہوں نے اندھرا پل، وارانسی (کینٹ) ریلوے اسٹیشن ، لھرتارا، منڈواڈیہ ہوتے ہوئے ڈیریکا پہنچے ، جہاں انہوں نے رات آرام کیا۔مسٹر مودی کے اس دورہ کے پروگرام کا سرکاری اعلان پہلے سے نہیں کیا گیا تھا، لیکن رات میں ان کے شہر کی سڑکوں پر گھومنے پھرنے کے امکانات کو دیکھتے ہوئے ہفتہ کو دن بھر بحث ہوتی رہی۔اس کی وجہ سے ان کے دورے کے راستوں کے کنارے جگہ جگہ پارٹی کارکنان اور دیگر لوگ ان کو مبارکباد کےلئے کھڑے انتظار کر رہے تھے ۔ کئی مقاما ت پر لوگوں نے کاشی کی روایت کے مطابق ‘ہر ہر مہادیو کے جئے کار‘کے ساتھ ان کا استقبال کیا۔ وزیر اعظم نے کہیں ہاتھ جوڑ تو کبھی ہاتھ ہلا کر لوگوں کا سلام قبول کیا۔وزیر اعظم اتوار کو مرزاپور میں آب پاشی سے منسلک بانساگر پروجیکٹ کا افتتاح اور میڈ یکل کالج سمیت کئی ترقیاتی منصوبو ں کا سنگ بنیادرکھنے کے بعد ایک جلسہ عام سے خطاب کریں گے ۔ اس کے بعد وہ دہلی کےلئے روانہ ہو جائیں گے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close