پٹنہ

مہاگٹھبندھن میں بھی سیٹ تقسیم کو لے کر ہلچل بڑھنے لگی

پٹنہ :بہار کے اندر این ڈی اے میں لوک سبھا انتخابات کو لے کر سیٹ تقسیم پر بنی رضامندی کے بعد مہاگٹھبندھن دباؤ میں ہے۔ مخالف صفوں میں سیٹ شیئرنگ کا فارمولا طے ہونے کے بعد اب مہاگٹھبندھن میں بھی سیٹ تقسیم کو لے کر ہلچل بڑھتی نظر آرہی ہے۔
بہار پردیش کانگریس کے صدر مدن موہن جھا نے کہا ہے کہ مہاگٹھبندھن میں سیٹ بٹوارہ بغیر کسی تنازعہ کے ہو جائے گا۔ مدن موہن جھا نے کہا کہمہاگٹھبندھن کے اندر سیٹ شیئرنگ کے لئے کوآرڈی نیشن کمیٹی تشکیل اگلے 2 سے 3 دنوں کے درمیان کی جائے گی۔ این ڈی اے کے اندر جے ڈی یو کو بی جے پی کے برابر سیٹیں ملنے کے بعد کانگریس کے اندر سے بھی یہ مطالبہ اٹھنے لگا ہے کہ آر جے ڈی بھی 50، 50 کا فارمولا اپنا کر آگے بڑھے۔ اگرچہ مدن موہن جھا نے کہا کہ آر جے ڈی قیادت کے ساتھ کانگریس اعلی کمان اور ہم کے قومی صدر جیتن رام مانجھی مسلسل رابطے میں ہیں۔ مہاگٹھبندھن کے اندر سیٹ کا بٹوارہ بغیر کسی پریشانی کے ہو جائے گا۔
مہاگٹھبندھن کے اندر سیٹ شیئرنگ میں سب سے بڑی رکاوٹ اس بات کو لے کر ہے کہ آر جے ڈی صدر لالو پرساد یادو رانچی جیل میں بند ہے۔ پارٹی کی کمان سنبھال رہے تیجسوی یادو کوئی بھی فیصلہ بغیر ان کی رضامندی کے نہیں لیں گے۔ ایسے میں سب کو انتظار مہاگٹھبندھن میں ٹیبل ٹاک کے شروع ہونے کا ہے۔ آپ کو بتا دیں کہ ا س کوآرڈی نیشن کمیٹی میں مہاگٹھبندھن کے ہر پارٹی سے 2 -2 لوگ شامل ہوں گے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close