پٹنہ

نتیش حکومت کے خلاف تیجسوی نے محاذ کھولا

پٹنہ: مظفر پور شیلٹر ہوم میں بچیوں کے ساتھ ہوئی حیوانیت کے خلاف آر جے ڈی لیڈر تئجسوی یادو نے ملک گیر احتجاجی مظاہرہ کا اعلان کیا ہے۔ راشٹریہ جنتا دل نے بہار کے مختلف شیلٹر ہوم میں جنسی استحصال کے معاملات کے خلاف نتیش کمار سے استعفی کی مانگ کو لے کر جمعہ کو ملک گیر بند کی بات کہی ہے۔آر جے ڈی نے 4 اگست کو مظفر پور سانحہ کے خلاف دھرنا میں شامل ہونے کے لئے راہل گاندھی، اکھلیش یادو، ممتا بنرجی تمام اپوزیشن رہنماؤں سمیت سول سوسائٹی کے تمام نمائندوں پر زور دیا ہے۔ تئجسوی یادو نے کہا ہے کہ کانگریس صدر راہل گاندھی، مغربی بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی اور دہلی کے وزیر اعلی اروند کجریوال بھی دھرنے میں شامل ہوں گے۔ آر جے ڈی نے دھرنے کو غیر سیاسی کہا ہے۔
آر جے ڈی لیڈر تئجسوی یادو نے سوشل میڈیا پر بھی اس سے متعلق پوسٹ کیا ہے۔ ان کے ساتھ ہی ان کے بڑے بھائی تیج پرتاپ یادو، بہن میسا بھارتی سمیت آرجے ڈی لیڈروں نے دھرنے میں شامل ہونے کے لئے لوگوں کا اعلان کیا ہے۔
جمعہ کو تئجسوی یادو نے ٹویٹ کیا، ‘ایک آواز ایسی اٹھائی جائے جس کا شور آنے والی نسلوں کی روح کو جھنجھوڑتی رہے۔ ہماری آنے والی نسلیں یہ نہ کہیں کہ ہمارے باپ دادا بزدلانہ اور ناکارہ تھے ۔تئجسوی یادو نے بہار حکومت پر بڑا الزام لگاتے ہوئے ٹویٹ کر کہا ہے کہ برجیش ٹھاکر کی جب گرفتاری ہوئی تو سینئر پولیس افسر کو کئی مرکزی وزراء اور ریاست کے حکمراں وزراء کے فون آنے لگے۔یہ وزیر کون ہیں؟ یہ سب سی ایم کے سے منسلک ہیں۔ اس لئے میں برجیش ٹھاکر کے فون کے ایک سال کی کال ڈیٹیلس کا مطالبہ کرتا ہوں۔ یہ سب لوگ اس کیس میں بے نقاب ہو جائیں گے۔
وہیں آر جے ڈی کے دھرنے اور تئجسوی کے اعلان پر جے ڈی یو لیڈروں نے طنز کسا ہے۔جے ڈی یو لیڈر سنجے سنگھ نے تئجسوی اور تیج پرتاپ پر سنگین الزام لگاتے ہوئے کہا ہے کہ 2008 میں دہلی کے فائیو اسٹار ہوٹل میں چھیڑ چھاڑ کیا تو دونوں بھائیوں کی جم کر پٹائی ہوئی تھی۔ دہلی میں تین تین جگہوں پر چھیڑ چھاڑ کا الزام لگا تھا وہ بھول گئے۔جے ڈی یو لیڈر نیرج کمار نے کہا کہ تئجسوی یادو کے پرائیویٹ سیکریٹری منی یادو پر غیر اخلاقی جسم فروشی کا الزام ہے۔ اس صورت میں 2011 میں گاندھی میدان تھانہ میں درج ہواہے کیس۔ اس صورت میں وہ جیل بھی جا چکے ہیں۔ ابھی تئجسوی یہ بتائیں کہ غیر اخلاقی جسم فروشی کے ملزم کو اپنے ذاتی اسسٹنٹ کے عہدے سےہٹائے گا کیا؟
تئجسوی نے اس واقعہ پر بہار کی نتیش کمار حکومت کو گھیرا ہے اور کہا ہے کہ نتیش کمار کے راج میں پوری ریاست میں قانون و انتظام کلچر متاثر ہوتا ہے۔ تئجسوی یادو نے مظفرپور شیلٹرہوم اسکینڈل کے مرکزی سرپرست برجیش ٹھاکر کے ساتھ اپنے باپ لالو یادو کی تصویر کو لے کر بھی اپنی بات رکھی۔

انہوں نے کہا کہ یہ تصویر کافی پرانی ہے. انہوں نے کہا کہ یہ پھوٹو 1990 کے آس پاس ہے، جب برجیش ٹھاکر ایک معمولی رپورٹر تھا اور اس وقت یہ این جی او بھی نہیں کھلا تھا. تئجسوی نے کہا کہ یہ تصویر اس وائرل کی جا رہی ہے تاکہ پورے معاملے سے لوگوں کی توجہ ہٹا دیا جا سکے.

تئجسوی یادو نے برجیش ٹھاکر کی جے ڈی یو کے رہنماؤں کے ساتھ تصویر ہونے پر سوال اٹھاتے ہوئے کہا کہ کہیں نہ کہیں جے ڈی یو کے بڈے़ لیڈر اس پورے معاملے میں پھنسے ہوئے ہیں. وہیں سی ایم نتیش کمار ملزمان کو بچانے کی کوشش کر رہے ہیں.

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close