پٹنہ

نتیش کی اپیل نہیں ٹھکرا سکیں رابڑی

پٹنہ: بہار کی سیاست میں یوں تو بڑے اور چھوٹے بھائی کے کئی قصے ہیں. لیکن مہاگٹھبندھن سے جدا ہونے کے بعد نتیش کمار اور لالو یادو کے رشتو ںمیں آئی تلخی کسی سے چھپی نہیں ہے۔بڑے بھائی لالو یادو بھلے ہی سیاسی طور پر فعال نہ ہو لیکن بھتیجےتیجسوی نے مسلسل چچا نتیش کی ناک میں دم کر رکھا ہے۔ سیاسی تعلقات میں آئی تلخی کے درمیان تعلقات کا ہلکا پھلکا لمحہ آج قانون ساز کونسل میں دیکھنے کو ملا۔
نتیش سے ہوئی رابڑی کی ملاقات
دراصل بہار اسمبلی کے سرمائی اجلاس کے پہلے دن وزیر اعلی نتیش کمار اور سابق وزیر اعلی رابڑی دیوی آمنے سامنے ہو گئے۔ قانون ساز کونسل چیئرمین کو باضابطہ طور پر سیشن کے آغاز پر مبارکباد دینے پہنچے وزیر اعلی نتیش کمار اور سابق وزیر اعلی رابڑی دیوی کی ملاقات ہو گئی۔ ہوا یوں کی نتیش کمار پہلے ہی چیئرمین کے کمرے میں موجود تھے اور بعد میں آئی رابڑی دیوی نے بھی چیئرمین ہارون رشید کو گلدستے دے کر سیشن کے لئے نیک خواہشات دی۔ رابڑی دیوی گلدستے دے کر واپس لوٹنے لگیں تب نتیش کمار نے مسکراتے ہوئے ان سے بیٹھنے کی اپیل کی۔ رابڑی دیوی بھی نتیش کمار کی بات کو ٹال نہیں سکیں اور تھوڑی دیر کے لئے چیئرمین کے کمرے میں ہی بیٹھ گئیں۔اس دوران سب کے درمیان ہلکی پھلکی بات چیت بھی ہوئی۔
لالو خاندان سے نتیش کمار کی نزدیکیاں پوشیدہ نہیں ہیں۔ سیاسی طور پر آج بھلے ہی نتیش لالو کے کنبے سے دور کھڑے ہوں لیکن سب کو پتہ ہے کہ مہاگٹھبندھن میں رہتے ہوئے نتیش کمار جب بھی لالو یادو کے گھر پر پہنچے تب رابڑی دیوی نے بڑے ہی احترام کے ساتھ نتیش کمارکوخود اپنے ہاتھوں سے کھانا کھلایا۔ نتیش اور لالو کے درمیان چھوٹے اور بڑے بھائی کے اس رشتے نے رابڑی دیوی کو نتیش کمار کا بھابھی بنا دیا اور نتیش دیور بن گئے۔ رشتوں کے درمیان جاری سیاست کے درمیان یہ پرانی یادوں کا ہی اثر ہے کہ ایک دوسرےپر تنقیدکرنے والے سامنے آ جائیں تو ہاتھ ملا ہی لیتے ہیں اور چہرے پر مسکراہٹ آ جاتی ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close