کھیل

وراٹ کی سنچری کے باوجود ہندستان کی شکست

پنے، کپتان وراٹ کوہلی (107) کی سنچری کے باوجود ہندستان کو ویسٹ انڈیز کے خلاف تیسرے ایک روزہ بین الاقوامی کرکٹ میچ میں سنیچر کو 43 رن سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ ویسٹ انڈیز نے یہ مقابلہ جیت کر پانچ میچوں کی سیریز 1-1 سے برابر کرلی ہے۔
نوجوان وکٹ کیپر شائی ہوپ 95 رن کی ایک اور شاندار اننگز کی بدولت ویسٹ انڈیز نے ہندستان کے خلاف تیسرے ون ڈے میں ہفتہ کو 50 اوور میں نو وکٹ پر 283 رنز بنا ئے اور پھر وراٹ کی ۔38ویں سنچری کے باوجود ہندستان کو 47.4 اوور میں 240 رن پر سمیٹ دیا۔
وراٹ کو اس شکست سے کافی مایوسی ہوئی چونکہ انہیں کریز کے دوسری جانب سے ساتھ نہیں مل پایا۔ وراٹ کا وکٹ 42 ویں اوور میں 220 رن کے اسکور پر گرا اس کے ساتھ ہی ہندستان کی امیدیں ختم ہوگئیں۔ وراٹ کو آف اسپینر مارلن سیموئل نے بولڈ کیا۔
ہندستانی کپتان نے 119گیندوں میں 10 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے107 رن بنائے۔ وراٹ کی یہ 38ویں ، ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے 23 ویں ، مسلسل تیسری اور 62 ویں بین الاقوامی سنچری تھی۔وراٹ سریز میں مسلسل تیسری سنچری بنانے والے پہلے ہندستانی بلے باز بن گئے ہیں۔ اس معاملے میں سری لنکا کے کمار سنگا کارا مسلسل چار سنچریاں بنانے کر عالمی ریکارڈ اپنے نام کرچکے ہیں۔وراٹ کی یہ 62 ویں بین الاقوامی سنچری تھی اور انہوں نے جنوبی افریقہ کے جیک کیلس کی برابری کرلی ہے۔ان سے آگے سنگاکارا ، آسٹریلیا کے رکی پونٹنگ 71 اور سچن تندولکر کی 100 سنچریاں ہیں۔
سلامی بلے باز روہت شرما 8 کا وکٹ جلد گرنے کے بعد شکھر دھون اور وراٹ کوہلی کے درمیان دوسرے وکٹ کے لئے 79 رن کی ساجھےداری ہوئی۔ شکر 45 گیندوں میں 35 رن بناکر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوئے۔ رشبھ پنت نے 18 گیندوں میں تین چوکوں اور ایک چھکےکی مد سے 24 رن بنائے۔ مہندر سنگھ دھونی 11 گیندیں کھیل کر وکٹ کیپر کو کیچ دے بیٹھے۔ انہوں نے کل 7 ر ن بنائے۔ بھونیشور کمار نے 10 بنائے جبکہ چہل اور خلیل احمد نے تین تین رن بنائے۔ویسٹ انڈیز کی جانب سے ہولڈر، میکائے اورنرس نے دو دو وکٹ لئے جبکہ سیموئل نے ہندستانی بلےبازوں کی کمر توڑتےہوئے12 رن پر تین وکٹ لئے۔اس سے قبل ویسٹ انڈیز کی جانب سے نوجوان وکٹ کیپر شائی ہوپ 95 رن کی ایک اور شاندار اننگز کھیلی۔ہوپ مسلسل دوسرے میچ میں سنچری بنانے سے صرف پانچ رن سے چوک گئے۔ ہوپ نے 113 گیندوں پر 95 رن میں چھ چوکے اور تین چھکے لگائے۔ ہوپ کو ياركرمین جسپريت بمراه نے ایک بہترین یارکر پر بولڈ کیا۔ پہلے دو میچوں میں آرام پانے والے بمراه اس میچ میں ٹیم میں واپس آئے اور 10 اوور میں 35 رن دے کر چار وکٹ لئے۔ بمراه سب سے زیادہ کامیاب ہندستانی بولر رہے۔
ویسٹ انڈیز نے ایک وقت اپنے پانچ وکٹ صرف 121 رن پر گنوا دیئے تھے اور اس کا 250 تک پہنچنا مشکل لگ رہا تھا لیکن ہوپ کی بہترین اننگز اور نچلے آرڈر میں کپتان جیسن ہولڈر، ایشلے نرس اور کیمار روچ نے تیز اننگز کھیل کر ویسٹ انڈیز کو لڑنے والے اسکور تک پہنچا دیا۔
ہولڈر نے 39 گیندوں پر 32 رنز میں دو چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ نرس نے خطرناک انداز میں بلے بازی کرتے ہوئے 22 گیندوں پر 40 رنز میں چار چوکے اور دو چھکے اڑائے۔ نرس نے اننگز کے 49 ویں اوور میں بھونیشور کمار کی گیندوں پر ایک چھکا اور تین چوکے لگاتے ہوئے 21 رن بنائے روچ نے ناٹ آؤٹ 15 رن میں ایک چوکا اور ایک چھکا لگایا۔بمراه نے آخری اوور میں کنٹرول دکھایا اور ویسٹ انڈیز کو مسلسل تیسرے میچ میں 300 سے اوپر جانے سے روک دیا۔ بمراه نے 35 رن پر چار وکٹ لئے جبکہ چائنامین بولر کلدیپ یادو نے 52 رن پر دو وکٹ لئے۔ بھونیشور نے 70 رن پر ایک وکٹ، خلیل احمد نے 65 رن پر ایک وکٹ اور يجویندر چہل نے 56 رن پر ایک وکٹ لیا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close