کھیل

پرتھ ٹیسٹ: آسٹریلیا گیند بازوں نے بھارت کو شکست کی طرف دھکیلا

پرتھ:آسٹریلوی گیند بازوں نے یہاں پرتھ اسٹیڈیم میں کھیلے جا رہے دوسرے ٹیسٹ میچ میں بھارت کو شکست کی طرف دھکیل دیا ہے. آسٹریلیا کی طرف سے رکھے گئے 287 رنز کے ہدف کے سامنے بھارت نے چوتھے دن کا اختتام ہونے تک اپنے پانچ وکٹ محض 112 رنز پر ہی گنوا دیئے ہیں. بھارت کو میچ کے پانچویں اور آخری دن فتح کے لئے اب بھی 175 رنز اور بنانے ہیں جبکہ آسٹریلیا کو جیت کے لئے پانچ وکٹ درکار ہے. اگر آسٹریلیا یہ میچ جیت جاتی ہے تو وہ سیریز میں 1-1 سے برابر کر لے گی. آسٹریلیا نے دن کی شروعات چار وکٹ کے نقصان پر 132 رنز کے ساتھ کی تھای. ٹیم کے اکاؤنٹ میں 111 رنز اور جوڑ کر پویلین لوٹ لی. اسے فوری طور سمیٹنے میں چھ وکٹ لینے والے محمد سمیع کا اہم تعاون رہا. ہدف کا تعاقب کرنے اتری بھارتی ٹیم سے امید تھی کہ وہ دو دن رہتے اس مقصد کو آسانی سے حاصل کر لے گی، لیکن اس کی سلامی جوڑی ایک بار پھر ناکام رہی. مشیل اسٹارک نے اننگز کی چوتھی گیند پر ہی لوکیش راہل (0) کو بولڈ کر دیا. ایڈیلیڈ میں کھیلے گئے پہلے ٹیسٹ میچ میں سنچری بنانے والے چتیشور پجارا (4) 13 کے مجموعی اسکور پر جوش ہیزل وڈ کی گیند پر وکٹ کے پیچھے کپتان ٹم پین کے ہاتھوں پکڑے گئے. بھارتی کپتان وراٹ کوہلی پر ایک بار پھر ٹیم کو بچانے کی ذمہ داری آن پڑی تھی، لیکن ناتھن لین کی گیند پر وہ 17 کے ذاتی اسکور پر عثمان خواجہ کے ہاتھوں کیچ ہوئے. یہ میزبان ٹیم کے لئے بڑا وکٹ تھا. یہاں سے اس کے اعتماد میں بے حد اضافہ ہوا. دوسرے اوپنر مرلی وجے وکٹ پر تھے، لیکن لاین نے انہیں خوبصورتی سے بولڈ کر بھارت کا اسکور 55 رنز پر چار وکٹ کر دیا. ابھی کرج پر ذیلی کپتان اجنکیا رہانے اور آسٹریلیا میں اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیل رہے ہنما وہاری تھے. دونوں نے پانچویں وکٹ کے لئے 43 رن جوڑ لئے تھے. ہیزل وڈ نے رہانے کو 30 کے ذاتی اسکور پر آؤٹ کر بھارت کی میچ جیتنے کی امید تقریباً ختم کر دیں. ہنما 58 گیندوں پر چار چوکے مار 24 رن بنا کر ناٹ آؤٹ ہیں. ان کے ساتھ رشبھ پنت 19 گیندوں پر نو رن بنا کر کھیل رہے ہیں. اس سے پہلے، خواجہ اور پین نے چوتھے دن آسٹریلیائی اننگز کو تیسرے دن کے اسکور سے آگے بڑھایا. دونوں نے ابتدائی تقریباً ایک گھنٹے بہترین بلے بازی کی اور بھارتی گیند بازوں کو وکٹ کے لئے پریشان کیا. آخر کار سمیع نے پین (37) کو 192 کے مجموعی اسکور پر آؤٹ کر بھارت کو پہلی کامیابی دلائی. یہاں سے سمیع اور جسپریت بمراہ دونوں حاوی ہو گئے. تیسرے دن ریٹائرڈ ہوئے ایران فنچ (25) پین کے بعد بلے بازی کرنے اترے، لیکن سمیع نے آتے ہی انہیں پویلین پہنچا دیا. خواجہ نے ان دونوں کے جانے سے پہلے اپنی نصف سنچری مکمل کر لی تھی. وہ 72 رنز کے ذاتی اسکور پر کھیل رہے تھے. فنچ کے جانے کے بعد ٹیم کے اکاؤنٹ میں چھ رنز کا اضافہ ہی ہوا تھا کہ خواجہ سمیع کی گیند پر وکٹ کے پیچھے پنت کے ہاتھوں کیچ ہوئے. انہوں نے اپنی اننگز میں 213 گیندوں کا سامنا کرتے ہوئے پانچ چوکے مارے. 198 کے مجموعی اسکور پر ہی پیٹ کمنز (1) کو بمراہ نے بولڈ کر آسٹریلیا کو آٹھواں جھٹکا دیا. سمیع نے ناتھن لاین (4) کو بھی اپنا شکار بنایا. آخری وکٹ کے لئے جوش ہیزل وڈ (ناٹ آووٹ 17) اور مشیل اسٹارک (14) نے 36 رنز کی شراکت کی. بمراہ نے سٹارک کو آؤٹ کر میزبان ٹیم کی اننگز کا خاتمہ کیا. بھارت کے لئے سمیع کے علاوہ بمراہ نے تین وکٹ اپنے نام کئے. ایشانت شرما کے حصے ایک وکٹ آیا.

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close