تعلیم

پٹنہ ہائی کورٹ نے داروغہ بحالی مینس امتحان کے نتائج کو منسوخ کیا

پٹنہ:پٹنہ ہائی کورٹ نے داروغہ بحالی مین امتحان کے نتائج کو منسوخ کر دیا ہے۔ بدھ کو عدالت نے بہار پولیس ملازم منتخب کمیشن کو ہدایت کی ہے کہ وہ صحیح کارروائی پر عمل کرکے نظر ثانی شدہ نتیجہ جاری کرے۔ اس کے پہلے 24 ستمبر کو عدالت نے تمام فریقوں کی سماعت کے بعد فیصلہ محفوظ رکھ لیا تھا۔ چیف جسٹس شیواجی پانڈے کی بینچ نے رمیش کمار سنگھ اور دیگر 190 سے زائد درخواست گزاروں کی رٹ درخواست کی سماعت مکمل کرکےفیصلہ محفوظ رکھنے کا حکم دیا۔ اس سے پہلے عدالت نے کیس کی سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے آخری نتیجہ پر روک لگا دی تھی۔بہار پولیس میں داروغہ کے 1717 عہدوں پر بحالی کے لئے ہوئے امتحان کا نتیجہ 5 اگست کو جاری کیا تھا۔ اس میں 10161 امیدوار کامیاب قرار ہوئےتھے۔پی ٹی اور امین امتحان کے رزلٹ میں بڑے پیمانے پر گڑبڑیوں کا الزام لگایا گیا تھا۔
انتہائی پسماندہ خواتین زمرے کے رزلٹ میں دھاندلی کا الزام:
الزام کے مطابق داروغہ بحالی کے پی ٹی امتحان میں انتہائی پسماندہ خواتین زمرے میں 149 امیدواروں کو پاس دکھایا گیا تھا۔ لیکن جب اہم امتحان کا نتیجہ نکلا تو اس طبقے کی 378 خواتین کو کامیاب دکھایا گیا۔ اب سوال یہ ہے کہ مین امتحان میں پی ٹی سے زیادہ کس طرح رزلٹ ہو سکتا ہے۔ جب پی ٹی میں 149 امیدوار پاس ہوئے تو مینس میں ان کی تعداد 378 کس طرح ہو گئی۔پی ٹی امتحان میں تو پاس کرنے والے امیدواروں کی تعداد 149 سے کم ہونی چاہئے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close