پٹنہ

پی ایم سی ایچ کی نرسیں کام پر واپس لوٹیں

پرنسپل کی یقین دہانی کے بعد معاملہ ختم

پٹنہ:بہار کے سب سے بڑے سرکاری اسپتال پی ایم سی ایچ کی نرسیں کام پر واپس لوٹ آئی ہیں۔ اسپتال میں اپنی سیکورٹی کے سوال پر ان نرسوں نے کام کا بائیکاٹ کر دیا تھا لیکن اب پی ایم سی ایچ کی نرسیں کام پر لوٹ آئی ہیں۔ گھنٹوں چلی میٹنگ کے بعد یہ معاملہ سلجھ گیا۔ اسپتال کی نرسوں کے کام پر لوٹنے کے بعد صحت خدمات پھر سے بحال ہوگئی ہے۔
موصولہ اطلاع کے مطابق ہنگامہ کر رہی نرسوں سے میٹنگ کے دوران اسپتال کے پرنسپل نے ان کے تحفظ کی یقین دہانی کرائی ہے ۔ انہوں نے نرسوں کی سیکورٹی کےلئے اس بات کو یقینی بنایا کہ نائٹ ڈیوٹی میں سیکورٹی سےجڑے دیگر نکات پر بھی غور کرنے کی بات پرنسپل نے کہی ہے۔رات میں ڈیوٹی کرنے والی نرسوں کو آنے والے وقت میں بھی یقینی بنانے کےلئے پرنسپل نے سخت سیکورٹی انتظامات کی بات کہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ رات میں سی سی ٹی وی کیمروںکے فوٹیج پر نگرانی کی جائے گی۔
اس دوران نرسوں کو اس بات کا یقین دلایا گیا کہ مارپیٹ کرنے کے قصوروار مریضوں کے اہل خانہ کے خلا ف کارروائی کر کے ان کی گرفتاری کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ نائٹ ڈیوٹی کے دوران نرسوں کی سیفٹی کےلئےکافی ہوشیاری برتی جائے گی۔ ساتھ ہی کئی دیگر نکات پر پی ایم سی ایچ میں نرسوں کے ساتھ مذاکرات ہوئی ۔
قابل ذکر ہے کہ جمعہ کی رات پی ایم سی ایچ میں ایک نرس کےسا تھ مریض کے اہل خانہ کے ذریعہ مارپیٹ کا واقعہ پیش آیا تھا ۔اس کے بعد نرسوں نے کام کا بائیکاٹ کیا۔ ساتھ ہی ہڑتال پر جانے کی بھی وارننگ دی لیکن اس سے قبل ہی مذاکرات کر کے معاملے کو حل کر لیا گیا۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close