پٹنہ

ڈرنیج سسٹم کے بارے میں پوری سمجھ ہو نی چاہئے:نتیش کمار

پٹنہ :وزیر اعلیٰ جناب نتیش کمار نے آج 1انے مارگ واقع سنکلپ میں پٹنہ شہر کے پانی کی نکاسی کے سلسلہ میں جائزہ میٹنگ کی ۔ میٹنگ میں وزیر اعلیٰ نے شہری ترقیات محکمہ کے افسران سے پٹنہ کے ایس کے پوری تھانہ حلقہ کے موہن پور سمپ ہاوس کے کھلے نالے میں17نومبرکی دو پہر گرے 10سالہ دیپک کو لے کر چلائے جارہے سرچ آپریشن کی پوری جانکاری لی افسران نے وزیر اعلیٰ کے سامنے دیپک کی تلاش کے سلسلہ میں چلائے جارہے سرچ آپریشن سے متعلق ویڈیو کلپ اور فوٹو گراف وزیر اعلیٰ کے سامنے پیش کیا ۔پٹنہ میونسپل کارپوریشن کے کمشنر جناب انوپم کمار سومن نے وزیر اعلیٰ کو بتا یا کہ پورے پٹنہ میں 29ہزار مین ہول ہیں ، جس میں سے تقریبا 1000کھلے ہوئے ہیں۔انوپم کمار سومن نے بتا یا کہ ان مین ہول کو بند کر نے کی سمت میں کارروائی کی جارہی ہے ۔ 30دسمبر تک تمام کھلے مین ہول بند کر دیے جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ ہر 30میٹر پر پٹنہ میں مین ہول ہے اور مشینوں کے ذریعہ اس کی صفائی کا کام کیا جارہا ہے ۔ نائب وزیر اعلیٰ جناب سشل کمار مودی نے اس میٹنگ میں مشورہ دیا کہ مین ہول کور کر نے کے سلسلہ میں پالیسی بنا نی چاہئے۔ وزیر اعلیٰ نے ایسے واقعات دوبارہ رونما نہ ہوں اس کے لیے ہر ممکن کارروائی یقینی بنا نے کی ہدایت دی ۔انہوں نے کہاکہ ڈرنیج سسٹم کے بارے میں پوری سمجھ ہو نی چاہئے ۔ پٹنہ ڈی ایم کو ہدایت دیتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ راجدھانی کی سڑکوں پر گھومتے آوارہ مویشیوں کو پکڑ کر اسے گوشالہ میں رکھنے کی کارروائی شروع ہوئی تھی۔ وہ باضابطہ طور پرہو نی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ سمپ ہائوس میں بچے کے گرنے کا جو واقعہ پیش آیا ہے وہ آوارہ جانوروں کے سبب ہوا ہے۔ سڑک پر مویشیوں کے گھومنے سے حادثات بھی ہوجاتے ہیں ۔ اس کیلئے جو بھی ضرورتیں ہیں اسے درست کیجئے ۔ انہوں نے کہا کہ اس کے لیے گوشالہ کی صلاحیت بڑھانی ہو یاوہاں اور بھی زیادہ آدمی رکھنے کی ضرورت ہے تو اسے پورا کیجئے ۔ وزیر اعلیٰ نے ہدایت دی کہ سڑک پر پھر رہے جانوروں کے پکڑے جانے پر اس کے مالکوں پر جرمانہ لگا یا جائے ۔ اگر پھی بھی ان کے مویشیوںسڑکوں پر گھومتے پکڑے جا ئیں تو انہیں ضبط کر کے انہیں فروخت کرنے کا انتظام کریں ۔انہوں نے کہا کہ گوشالہ میں پکڑے گئے آوارہ مویشیوں سے نکلنے والے دودھ کے علاوہ گوبر اور پیشاب کے استعمال کا انتظام بھی یقینی بنا یا جائے ۔ پٹنہ کے بعد اس نظام کو دھیر دھیرے بہار کے دیگر بڑے شہروں میں کیا جائے ۔
وزیر اعلیٰ نے افسران سے کہا کہ ڈرینج سسٹم کی صفائی کے ساتھ ساتھ اس کو کور کر اور اس میں جمے ہوئے کچرے اور گندگی کے مسائل کو ختم کر نے کے لیے مسلسل اور مستقل طور پر ہو نا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ سمپ ہائوس اور ڈرنیج کے درمیان جالی لگی ہونی چاہئے ،تاکہ ٹھوس سامان کے آجانے پر ڈرنیج جام نہیں ہو سکے ۔ ماڈل ی شکل میں پٹنہ میں یہ نظام بنا کر اس کے ہر پہلو کو دیکھئے پھر ضرورت کے مطابق بہار کے ہر شہر میں لاگو کیاجائے گا ۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ اب تک ملے شواہد سے یہ واضح ہو گیا ہے کہ بچہ نالہ تک آیا اور اس میں گر گیا انہوں نے پٹنہ ڈی ایم کو ہدایت دی کہ متاثرہ اہل خانہ کو فی الحال 4لاکھ روپے معاوضہ کی رقم دینے کی ہدایت دی ۔میٹنگ میں نائب وزیر اعلیٰ جناب سشل کمار مودی ، شہری ترقیات کے وزیر جناب سریش شرما،چیف سیکریٹری جناب دیپک کمار ، وزیر اعلیٰ کے پرنسپل سیکریٹری جناب چنچل کمار ، وزیر اعلیٰ کے سیکریٹر جناب منیش کمارورما ، وزیر اعلیٰ کے خصوصی سیکریٹر جناب انوپم کمار ، وزیر اعلیٰ کے او ایس ڈی جناب گوپال سنگھ ، پٹنہ میونسپل کارپوریشن کے کمشنر جناب انوپم کمار سومن ، بہار انفرااسٹرکچر اربن ڈیولپمنٹ کارپوریشن لمیٹیڈ کے مینجنگ ڈائریکٹر جناب امریندر پرساد سنگھ ، بہار ریاستی واٹر کونسل کے مینیجنگ ڈائریکٹر جناب راجیش مینا ، میونسپل کارپوریشن کے اڈشنل کمشنر جناب وشال آنند سمیت شہری ترقیات محکمہ کے دیگر افسران موجود تھے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close