پٹنہ

کانگریس ممبر اسمبلی 242 وس علاقوں کے انچارج بنے

پٹنہ:بہار میں تنظیم کو دھاردار بنانے میں مصروف کانگریس نے ریاست کے تمام 242 اسمبلی حلقوں میں اپنے 26 ممبران اسمبلی اور 3 ایم ایل سی کو انچارج کی ذمہ داری سونپی ہے۔ پارٹی کے بہار انچارج شکتی سنگھ گوہل نے انہیں اسمبلی حلقوں میں اجتماعی اور مثبت اپوزیشن کے کردار کا انتخاب کرنے کے لئے یہ ذمہ داری تفویض کی تھی۔وہ علاقے کے مسائل پر تحریک چلائیںگےاسمبلی ٹیم لیڈر سدانند سنگھ کو اس میں رکھا گیا ہے۔ ممبران اسمبلی کے ساتھ سمنوے کی ذمہ داری ڈاکٹر محمد جاوید کی دی گئی۔ ونے ورما کو مغربی چمپارن کے 6 اسمبلی، ایم ایل سی راجیش کمار کو مغربی چمپارن کے 3 اور مشرقی چمپارن کے چار اسمبلی، مدن موہن تیواری کو مشرقی چمپارن کے 8 اور شیوہر کا ایک، امت کمار ٹننا کو مدھوبنی کے 10 اسمبلی حلقہ کا چارج سونپا گیا ہے۔ بھاوناجھا کو سیتامڑھی کے 8، عبدالرحمن کو ارریہ کے 6، محمد توصیف عالم کو کشن گنج کے 4، ڈاکٹر جاوید کو نالندہ کے 7، عبدالجلیل مستان کو پورنیہ کے دو، محمدآفتاب عالم کو پورنیہ کے 5، شکیل احمد خاں کو کٹیہار کے 5، منوہر پرساد سنگھ کو کٹیہار 2، پونم پاسوان کو ویشالی کے 8، انل کمار کو گوپال گنج کے 6، وجے شنکر دوبے کو سارن کے 8 اور سارن کے 10 اسمبلی حلقوں کا چارج ملا ہے۔وہیں ڈاکٹر اشوک کمار کو دربھنگہ اور سمستی پور کے 10-10، رام دیو رائے کو بیگو سرائے کے 7، امیتا بھوشن کو کھگڑیا کے 4 اور مونگیر کے 3، اجیت شرما کو بھاگلپور کے 7، ایم ایل سی مدن موہن جھا کو مظفر پور کے 11، سدرشن کمار کو لکھی سرائے اور شیخ پورہ کے 4 وس علاقوں کا انچارج بنایا گیا ہے۔ اسی طرح سدھارتھ کو پٹنہ کے 7، ایم ایل سی پریم چندر مشرا کو پٹنہ کے 7، سنجے کمار تیواری کو بکسر 4، راجیش کمار کو روہتاس کے 7 اور ارول 2، آنند شنکر کو اورنگ آباد کے 6، اودھیش کمار سنگھ کو گیا کے 10 ،پرنیما یادو کو نوادہ کے 5 اور سدھیر کمار کو جموئی کے 4 اور بانکا ضلع کے 5 اسمبلی حلقوں کا انچارج مقرر کیا گیا ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close