پٹنہ

کانگریس کا پوسٹر دھماکہ، رافیل ڈیل پر 5 کروڑ کی پرائز منی رکھی

پٹنہ :بہار کانگریس نے ایک بار پھر پٹنہ کی سڑکوں پر پوسٹر لگا کر مرکز کی مودی حکومت پر نشانہ لگایا ہے۔ کانگریس نے وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے بنائے گئے 35 ایئرپورٹ کا نام اور رافیل طیارے کی قیمت عوام سے پوچھا ہے۔ اس کے لئے 5 کروڑ کا انعام دینے کا اعلان بھی پوسٹر میں کیا گیا ہے۔بہار کانگریس کی سرگرمیاں عوام کے درمیان کم صرف پٹنہ کی پوسٹروں میں ہی دکھائی دیتی ہیں۔ اس بار بھی پوسٹر لگانے والے وہی کانگریس لیڈر ہیں جنہوں نے کچھ دنوں پہلے پوسٹر لگا کر سونیا گاندھی، راہل گاندھی سے لے کر اپنے تمام بڑے لیڈروں کی ذات بتائی تھی۔ ویسے ہر بار پوسٹر لگنے پر کانگریس سرکاری طور پر اپنے آپ کو اس سے الگ کر لیتی ہے۔ لیکن پوسٹر لگانے والے اپنے رہنماؤں پر کوئی کارروائی نہیں کرتی۔اب بہار کانگریس کے ان پوسٹرباز لیڈروں کو کون سمجھائے کی رافیل کی قیمت راہل گاندھی بھی نہیں جانتے، تبھی تو وہ ہرجگہ رافیل کی مختلف قیمت بتاتے رہتے ہیں۔ اچھا ہوتا کہ کانگریس لیڈر رافیل کی صحیح قیمت اپنے قومی صدر ہی سے پوچھ لیتے تو ان کو انعام دینے کی ضرورت نہیں پڑتی۔ بتا دیں کہ بھارت اورفرانس کے درمیان ہوئے رافیل ڈیل میں قیمت کو خفیہ رکھنے کا ذکر ہے ۔
سشیل مودی نے دیا جواب:
کانگریس کی پوسٹر والی سیاست کو لے کر بی جے پی کے سینئر لیڈر اور نائب وزیر اعلی سشیل مودی نے کہا کہ ملک کی اہم اپوزیشن پارٹی کے پاس کوئی مسئلہ نہیں ہے۔ رافیل میں کوئی گھوٹالہ نہیں ہوا ہے۔پی ایم مودی پر لگائے گئے الزام غلط ہیں۔کانگریس صرف پوسٹر باز پارٹی بن کر رہ گئی ہے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close