بہارپٹنہسیاست

کانگریس کے سینئر لیڈر سدانند سنگھ کا بڑا اعلان نہیں لڑیں گے 2020کاانتخاب

پٹنہ :آئندہ لوک سبھا اور اسمبلی انتخاب سے پہلے کانگریس لیجسلیچر پارٹی کے لیڈر اور بھاگلپور کے کہلگائوں کے رکن اسمبلی سدانند سنگھ نے بڑا سیاسی دھماکہ کر دیاہے سدا نند سنگھ نے کہا ہے کہ وہ 2020 میں اسمبلی انتخاب نہیں لڑیں گےا نہوں نے کہا کہ اب ان کی عمر 80 سال سے زیادہ ہوگئی ہے وہ خود انتخاب لڑنے کے بجائے پارٹی کے امیدواروں کو انتخاب جتانے کا کام کریں گے اور اس کے لیے ہی اپنی پوری طاقت لگائیں گے سدا نند سنگھ کے اس بیان سے سیاسی گلیاروںمیں کھلبلی مچ گئی ہے ۔ویسے منایا جارہا ہے کہ اپنے بیٹے شوبھ آنند مکیش کو فرنٹ پر لانے کے لیے سدا نند سنگھ نے یہ اعلان کیا ہے گزشتہ اسمبلی انتخاب میں ہی سدا نند سنگھ اپنے بیٹے کو انتخاب میدان میں لانا چاہتے تھے لیکن پارٹی اعلیٰ کمان نے اس پر اتفاق نہیں کیا تھا ۔واضح ہو کہ سدا نند سنگھ 1967-69سے کہلگائوں اسمبلی حلقے کی نمائندگی کرتے آرہے ہیں ۔وہ پلی بار کانگریس کے ٹکٹ پر کہلگائو سے انتخاب لڑے تھے اور سی پی آئی کے ناگو سنگھ کو شکست دیکر رکن اسمبلی بنے تھے سدا نند سنگھ اسمبلی اسپیکر اور جگرناتھ مشر کی قیادت والے حکومت میں دو بار وزیر بھی رہ چکے ہیں ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close