سیاستہندوستان

کسانوں کا قرض معاف کرنے کےوعدے پر قائم ہیں:راہل

نئی دہلی: کانگریس کے صدر راہل گاندھی نے آج کہا کہ انہوں نے مدھیہ پردیش کے کسانوں سے قرض معاف کرنے کا جو وعدہ کیا ہے، اس کے لئے وہ عہد بند ہیں اور ریاست میں پارٹی کی حکومت بننے کے 10 دن میں کسانوں کا قرض معاف کر دیا جائے گا۔مسٹر گاندھی نے مدھیہ پردیش کے عوام کے نام یہاں جاری ایک پیغام میں کہا، ” ہم اپنے وعدے پر عہدبند ہیں، مدھیہ پردیش میں حکومت بنتے ہی 10 دنوں میں کسانوں کا قرض معاف کر دیں گے۔فصلوں کی مناسب قیمت کی گارنٹی ہوگی ۔ بجلی کا بل نصف ہوگا۔ بیٹیوں کی شادی پر کانگریس حکومت ماں باپ کا کردار ادا کرے گی اور 51 ہزار روپے کا تعاون دیا جائے گا۔
انہوں نے ریاست کے بے گھروں اور چھوٹے کسانوں کے سلسلے میں کہا کہ گھر بنانے کا ہر شہری کا خواب پورا کیا جائے گا۔ کسانوں کے بچوں کو زراعت پر مبنی صنعت لگانے کے مواقع دیے جائیں گے اور بیٹیوں کی اسکول سے پی ایچ ڈی تک کی تعلیم مفت ہوگی۔ خواتین کوسیکورٹی فیچر والا سمارٹ فون دیا جائے گا اور تعلیم کا معیار بڑھایا جائے گا۔
انہوں نے کسانوں کے قرض معافی کو ضروری قرار دیا اور کہا، "میرا خیال ہے کہ کسانوں کو قرض سے نجات دلانے کا مطلب ہے-معیشت کو ترقی دینا۔ کسان مالی طور پر مضبوط ہوں گے تو ملک کی معیشت بھی پٹری پر آئے گی۔ میں نہیں سمجھ پاتا ہوں کہ بی جے پی اس کی مخالفت کیوں کر رہی ہے۔
مجھے خوشی ہے کہ کانگریس کی کوششوں سے ملک کی سیاست کا رخ کسان کی طرف مڑ گیا ہے۔نہیں تو ایک وقت تھا جب چند سرمایہ داروں کے کہنے پر مودی جی کسانوں کے خلاف کسانوں کی زمین پر قبضہ کرنے کے لئے آرڈیننس پر آرڈیننس لا رہے تھے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close