بین الاقوامی

یہودی قومیت کے قانون کےمخالفین شام چلے جائیں: اسرائیلی لیڈر

مقبوضہ بیت المقدس:سرائیل کے ایک کثیرالاشاعت عبرانی اخبار ’یدیعوت احرونوت‘ نے وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو کا ایک بیان نقل کیا ہے جس میں اس نے یہودی قومیت کے متنازع قانون کی مخالفت کرنے والوں کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔عبرانی اخبار’معاریو‘ کے مطابق نیتن یاھو کے مقرب ایک شدت پسند لیڈر ناتان ایشل نے ایک بیان  میں کہا کہ اگر دروز فرقے کو اسرائیل کو یہودی ریاست قرار دینے کے متنازع قانون پر اعتراض ہے انہیں اپنی ریاست قائم کرنے کے لیے شام چلے جانا چاہیے۔ایشل کا یہ بیان اسرائیلی صحافی امنون ابراموفوٹیچ نے نقل کیا جسے بعد ازاں یدیعوت احرونوت اخبار میں شائع کیا گیا ہے۔ان کا کہنا ہے کہ یہودی قومیت کے قانون میں ترمیم کی کوئی تجویز قبول نہیں کی جائے گی۔ اگرکسی طبقے یا شخص کو اسرائیل کو یہودی ریاست قرار دینے کا قانون منظور نہیں اسے چاہیے کہ شام چلے جانا چاہیے۔خیال رہے کہ حال ہی میں اسرائیلی پارلیمنٹ نے ایک متنازع قانون کی منظوری دی ہے جس کے تحت اسرائیل کو پوری دنیا کے یہودیوں کا قومی اور نظریاتی ملک قرار دیا گیا ہے۔ اس متنازع اور کالے قانون پر فلسطینی اور عالمی سطح پر شدید رد عمل سامنے آیا ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close