ہندوستان

13 انٹگریٹیڈ چیک پوسٹوں کے لئے جلد کام شروع کریں :راج ناتھ

نئی دہلی:مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ نے پڑوسی ممالک سے متصل سرحدوں پر انٹگریٹیڈ چیک پوسٹ بنانے سے متعلق منصوبوں کی پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے مزید 13 پوسٹ بنانے کا کام شروع کرنے کی ہدایات دی ہیں۔ مسٹر راجناتھ سنگھ نے آج یہاں ایک میٹنگ میں وزارت داخلہ کے تحت کام کرنے والی لینڈ پورٹ اتھارٹی اور بارڈر منیجمنٹ ڈویژن کےموجودہ منصوبوں کا جائزہ لینے کے دوران حکام کو یہ ہدایت دی۔ میٹنگ میں یہ بتایا گیا کہ مربوط چیک پوسٹوں کی پہلے سے منظور شدہ سات منصوبوں میں سے پانچ کا کام مکمل ہو گیا ہے۔ یہ چیک پوسٹ ہند- نیپال سرحد پر رکسول اور جوگبني، ہند-بنگلہ دیش سرحد پر پیٹروپول اور اگرتلہ نیز ہند-پاکستان سرحد پر اٹاری میں بنائی گئی ہیں اور ان سے آمد و رفت ہو رہی ہے۔ ہند-میانمار سرحد پر مورہ اور ہند-بنگلہ دیش سرحد پر داوہي چیک پوسٹ کی تعمیر آخری مرحلے میں ہے۔ ان تمام پوسٹوں کی تعمیر پر 700 کروڑ روپے سے زیادہ کی لاگت آنے کا امکان ہے۔مسٹر راجناتھ سنگھ نے ان منصوبوں پر جاری کام کی پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے زیر التواء کاموں کو جلد مکمل کرنے اور افسران کو 13 اضافی مقامات پر پوسٹ بنانے کا کام شروع کرنے کی ہدایت دی۔ یہ پوسٹ هیلي، جےگاوں، گھوجاندر ، مہادي پور، چنگربندھ، پھولباڑي، روپیدھا، كورپوچھا، پاني ٹکي، ستارکنڈي، سنولي، بن باسا، بھتھمور اور پیٹروپول میں بنائی جائیں گی۔بارڈر منیجمنٹ ڈویژن کے تحت گجرات میں 18 ساحلی چوکیاں بنائی جا رہی ہیں جبکہ پنجاب اور راجستھان میں فلڈ لائٹ منصوبے پر کام کیا جا رہا ہے۔ گجرات اور مغربی بنگال میں کچھ فلوٹنگ پوسٹوں کی تعمیر بھی منظور کی گئی ہیے۔
ساحلی سکیورٹی مضبوط بنانے کے لئے 121 ساحلی پولیس اسٹیشن بنائے گئے ہیں، 30 جےٹي بنائی گئی ہیں اور 18 لاکھ ماہی گیروں کو بایومیٹرک کارڈ جاری کئے گئے ہیں۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close