ہندوستان

نئی نسل کو دینی تعلیم سے آراستہ کرنامسلمانوں کی اہم ذمہ داری

کولکاتہ10جوالائی(پریس ریلیز) حفظ و تجوید کے معروف ادارہ دارالعلوم اسراریہ،سنتوش پور،فاطمہ مسجدروڈ ،فقیر پاڑہ (جولہ) کولکاتہ میں نئے تعلیمی سال کے آغازکی مناسبت سے ایک پروگرام کا انعقاد ہوا۔اس موقع پرتیلنی پاڑہ جامع مسجد کے امام مفتی ابوشحمہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ دینی تعلیم کا حصول نہایت بابرکت عمل ہے اور دنیاوآخرت دونوں میں کامیابی و سعادت مندی کے حصول کاذریعہ بھی ہے ۔ انھوں نے کہاکہ قرآن پاک نبی آخر الزماںﷺپر نازل ہونے والی آخری آسمانی کتاب اور تا قیامت باقی رہنے والا معجزہ ہے،اس کتاب کوپڑھنے پڑھانے پر بے شمار فضیلتیں واردہوئی ہیں اور ان لوگوں کو خیرِامت قرار دیا گیا ہے، جنہیں قرآن سیکھنے اور سکھانے کی توفیق ملتی ہے ۔ ٹیپوسلطان شاہی مسجدکے امام مولاناثاقب انورنے کہاکہ تعلیم و تربیت اسلام کی بنیادی ہدایت ہے،کیوںکہ تعلیم کے بغیر کوئی بھی معاشرہ ترقی نہےں کر سکتااور نہ کامیاب ہوسکتاہے،لہذاہمےں تعلیم کی طرف بھرپورتوجہ دینی چاہیے۔انہوں نے اس بات پر خوشی کا اظہارکیا کہ دارالعلوم اسراریہ گذشتہ نو سال کی قلیل مدت میں اپنی تعلیمی و تربیتی کارکردگی کی وجہ سے اہل علم کی نظرمیں قابل اعتماد ہے۔انھوںنے کہاکہ شہری آبادی سے دورہونے کے باوجودداخلہ لےنے والے طلبہ کی بھےڑسے اندازہ ہوتاہے کہ دارالعلوم اسراریہ اپنے تعلیمی و تربیتی مشن میں تیزی سے کامیابی کی طرف گامزن ہے۔اس موقع پر بیت المعمور مولاعلی مسجدکے امام مفتی جمیل الرحمن صاحب نے طلبہ کو نصیحت کرتے ہوئے کہا کہ اللہ کے نبی ﷺکا ارشاد ہے کہ جو شخص علم حاصل کرنے کے لیے راستے کی مسافت کو طے کرتا ہے تواللہ تعالیٰ اس کے لیے جنت کا راستہ آسان فرمادیتے ہیں۔ےہ بڑی فضیلت کی بات ہے اورتمام طالب علموں کواس کا احساس ہونا چاہیے،چنانچہ اپنے مقام و مرتبہ کو پہچانتے ہوئے ہر اس عمل سے بچنا چاہیے جو طالب علم کے مقام اوراس کی پہچان کے خلاف ہو۔فورٹ نانی چیمبرنیومارکیٹ کے امام قاری صغیرنے کہاکہ اخلاصِ نیت،اساتذہ کا ادب و احترام، نمازکی پابندی اور ساتھیوں کے ساتھ محبت و ہمدردی کابرتاو¿اختیار کرناآپ کا شیوہ ہونا چاہیے۔واضح رہے کہ دارالعلوم اسراریہ میں گجرات کے طرز پر نوارنی قاعدہ ،حفظ و تجوید اور علومِ عصریہ کی معیاری تعلیم کے ساتھ طلبا کو نماز کے فرائض وواجبات اورمستحبات کے ساتھ شب و روز کی مسنون دعائیں یاد کروانے کا بھی خصو صی اہتمام کیاجاتا ہے ،اس کے ساتھ ساتھ ماہانہ امتحان و مسا بقہ کے ذریعے طلباکی یادداشت اور خوب صورت انداز میں تلاوتِ قرآن کی مشق بھی کروائی جاتی ہے جس کی وجہ سے یہا ں کے طلباحفظ مکمل کرنے کے بعد بغیر دورکیے تراویح سناتے ہیں ،اس کے علاوہ گذشتہ سالوں میں آل بنگال اور کل ہند سطح کے کئی مسابقوں میں یہاں کے طلبا اول،دوم اور سوم پوزیشن حاصل کرکے ادارے کانام روشن کرتے رہے ہیں۔پروگرام کے اخیر میں مدرسے کے مہتمم مولانا نوشیراحمد نے ادارہ کی کارگزاریوںاور آیندہ کے تعلیمی و تربیتی منصو بو ںکی تفصیل پیش کرتے ہوئے حاضرین اور تمام مہمانان کا شکر ےہ اد ا کیا ۔ اس موقع پر شریک رہنے والوں میں اے ایم اولڈ بوا ئز کے جنر ل سکریٹری انجینئر وقار احمدخان، قاری عبدالواحد اشا عتی ، قار ی شہنواز قاسمی،قاری حسن دینا جپوری،مولاناقاری شریف، قاری عبدالقاد ربھاگلپوری، قاری نثاراحمد،مولانا قار ی صدام گریڈیہہ،قاری یوسف ثمرقا سمی، مولانامنیرالدین ،مولوی سہیم الدین،ماسٹرافضال اور شمشیر احمد کے نام قابل ذکر ہیں۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close