ہندوستان

اظہر مخصوصی،۷سال سے دو وقت کاکھانا کھلانا پابندی سے کھلا رہے ہیں بھوکوں کو

حیدرآباد10جولائی(مختار احمد فردین) لوگ ساتھ آتے گئے اور کارواں بنتا گیا،اچھا کام کرنے سے انسان دوسروں کیلئے مثال بنتا ہے،اظہر مخصوصی نے بھی دنیا کو مثال پیش کیااور حیدرآباد کے بہت محنت ولگن سے اپنے کام کرنے والے اظہر مخصوصی کو والدین کی تربیت نے غریبوں کے بھوک پیاس کو اس شدت سے احساس دلاتا رہااوراس فکر میں اظہر ہمیشہ خودمیں اللہ سے دعاءکہ مجھے کچھ انسانیت کیلئے کچھ ایسا کام کر جانا ہے جس سے دنیا بھی سبق سیکھے اور ہم غریبوں کے درمیان رہکر اسکے دکھ دردکو محسوس کر سکیں، اپنی ضمیر کی آرزو پر خود میں ایک فیصلہ لیا، اس کام کو آگے بڑھا نے میںڈاکٹر مختار احمد فردین نے اپنی مکمل تعاون دیااور اس کام کیلئے ہمیشہ حوصلہ افزائی کرتے رہے جس طرح دبیر برج کے نیچے جگہ کا انتخاب اللہ نے کرائی ہے کیونکہ ریلوے اسٹیشن کے قریب مسافر بھوکے اور ضرورتمندوں کی موجودگی نے اظہر کو اس کام کو آگے بڑھانے میں مدد کئے، بھوکوں کو کھانا کھلانا نیک کام ہے اس میں کسی بھی مذہب کے لوگ ہوں، بھوکوں کا کوئی مذہب نہیں ہوتا، انسانیت ہی اسکی مثال ہے، ڈاکٹر مختار احمد فردین نے آج اظہر مخصوصی کو مبا رکباد اور گلپوشی کرتے ہوئے اپنے بنک آف بڑودہ کے اسٹا ف اور منیجر سے ملایااور ان میں بھی یہ جذبہ پیدا ہو اس غرض سے آج غریبوں کے درمیان بھوکوں کو اپنے ہاتھوں سے کھانا کھلایااور احساس پیدا ہواکہ اظہر مخصوصی کا یہ کام انسانیت کیلئے ایک مثال ہے، حیدرآباد کو اس پر فخر ہے، روزانہ حیدرآباد میں اظہر مخصوصی دوسنٹر گاندھی ہوسپیٹل اور دبیرپورہ برج اور ہندو ستا ن بھر میںثانی ویلفیر کے سنٹرس کا آغاز ہوچکا ہے اظہر مخصو صی کے کلموں کو دنیا بھر اور ہندوستان کے ٹی وی چینل نے پروگرام خصوصی کیاجس میں اظہرالدین سابق کرکٹر، امیتابھ بچن اور سلمان خان جیسے ہیرو کو اظہر سے ملنے پر فخر ہے،ڈاکٹر مختار احمد فردین نے بھی اظہر مخصوصی پر آج تک کئی ایک مضمون اورکئی ایک اسٹوری تیار کئے اور اس آل انڈیا اردو ماس کی جانب سے انسانیت کیلئے بے مثال کارنا مے ایوارڈ بھی دئیے،آج کی تاریخ میںاظہر مخصوصی سیکڑوں ایوارڈس حاصل کر چکے ہیںدنیا کے کونے کونے سے لوگ ملنے آتے ہیںاور اس نیک کام کیلئے سبھی تنظیمیںاور شعبے حیا ت کے لوگ جڑنا چاہتے ہیں اور اس کام میں ہاتھ بٹا تے ہیںآج اظہر مخصوصی نے کئی خواب دیکھ رکھے ہیں جس سے ملک میں محبت بھائی چارگی اور ہر ایک انسان کی خوشحالی سے ملک ترقی کی راہ پر چلیگی ، مگر شرط ہے کہ پہلے ہندوستان سے غریبی کا خاتمہ ہو،بھوکے پیاس کا کوئی مذہب نہیں اسلئے ان غریبوں کیلئے روٹی کپڑا مکان کا حل ضرور ڈھونڈ لیا جانا چا ہئے، اب مختار احمد فردین نے دنیا کے اور خاص ملک کے مو جودہ صو ر تحا ل کیلئے جہاں نفرتوں کی دیوار کھڑی ہو گئی ہے آج ضرورت ہے کہ اظہر مخصوصی کو اول ماڈل مان کر آپ فری فوڈ میں شامل اپنے محلے ،گاﺅںاور شہر میں اسکا آغاز کریںآج ہی شروع کر دیںاور آپ بھی ہیرو حیدرآباد اظہر مخصوصی بنکر مثال قائم کر یںانسانیت کیلئے جہاں دوو قت کی روٹی کسی کو نہیں کھلا سکتے وہاں اظہر ۷سال سے پابندی کیساتھ یہ سلسلہ جاری ہے بشرطیکہ آپ انسانیت کیلئے کام کریںاور انسان بنکر کریں۔
میں اکیلا ہی چلا تھا جانب منزل مگر
لوگ آتے گئے اور کارواں بنتا گیا

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Close